Sunday , September 23 2018
Home / شہر کی خبریں / جنتادل ایس ، کانگریس کواے پی ، تلنگانہ ، کیرالا اور ٹاملناڈو و قائدین کی تائید

جنتادل ایس ، کانگریس کواے پی ، تلنگانہ ، کیرالا اور ٹاملناڈو و قائدین کی تائید

جنتادل (ایس ) ارکان اسمبلی کو پناہ دینے ، نائیڈو اور کے سی آر کی پیشکش ، کانگریس ارکان کے تحفظ کیلئے کیرالا بھی تیار
جنتا دل (ایس ) ارکان کا حیدرآباد کی ہوٹل میں قیام
کانگریس ارکان کوچی کی ہوٹل میں ٹھہریں گے
جنتا دل (ایس) اور کانگریس کے ارکان اسمبلی کو حیدرآباد اور کوچی منتقل کیا جارہا ہے ۔ ان ارکان جنتا دل (ایس) کے ارکان اسمبلی حیدرآباد کی ہوٹل میں قیام کریں گے جبکہ کانگریس کے ارکان اسمبلی کو کوچی کی ہوٹل میں ٹھہرایا جارہا ہے۔ بنگلورو کے قریب ریسارٹ میں رکھے گئے ارکان اسمبلی کو خصوصی بسوں کے ذریعہ لایا گیا۔

حیدرآباد۔ 17 مئی (سیاست نیوز) کرناٹک میں جنتا دل (ایس) اور کانگریس ارکان اسمبلی کی حمایت کرتے ہوئے جنوبی ہند کی ریاستوں کے چیف منسٹروں اور اپوزیشن قائدین نے یہ پیشکش کی کہ وہ جنتا دل (ایس) اور کانگریس ارکان کو اپنے علاقہ میں پناہ دیں گے جبکہ چیف منسٹر آندھرا پردیش چندرا بابو نائیڈو اور تلنگانہ کے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے جنتا دل ارکان اسمبلی کو پناہ دینے کی پیشکش کی اور کیرالا نے کانگریس ارکان اسمبلی کی اپنی ریاست میں حفاظت سے رکھنے کی حامی بھری۔ ٹاملناڈو کے اپوزیشن لیڈر ایم کے اسٹالن نے گورنر کرناٹک پر شدید تنقید کی۔ چیف منسٹر کرناٹک کی حیثیت سے بی جے پی لیڈر بی ایس یدی یورپا کو آج حلف دلایا گیا۔ کانگریس اور جنتا دل (ایس) نے مشترکہ طور پر سپریم کورٹ سے رجوع ہوکر کہا کہ ان کے پاس حکومت سازی کیلئے ارکان اسمبلی کی مطلوبہ تعداد موجود ہے۔ سپریم کورٹ میں اس معاملہ کی سماعت باقی ہے۔ بی جے پی کے 104 ارکان اسمبلی میں اس کو سادہ اکثریت 112 کے جادوئی عہدے تک پہونچنے کے لئے مزید 8 ارکان کی ضرورت ہے۔ یدی یورپا کی پارٹی بی جے پی اب اپنی اکثریت ثابت کرنے کیلئے کانگریس اور جنتا دل (ایس) کے ارکان کو لالچ دے کر اپنی صف میں لانے کی کوشش کرے گی۔ سودے بازی کے ذریعہ اعتماد کا ووٹ جیت لینے کی بھی سازش ہورہی ہے۔ ایسے میں کانگریس اور جنتا دل کے ارکان کی حفاظت کرنا اہم ذمہ داری ہے۔ واضح رہے کہ صدر تلگو دیشم پارٹی چندرا بابو نائیڈو اور کرناٹک میں تلگو رائے دہندوں سے کہا تھا کہ وہ بی جے پی کو شکست دیں۔ ان کے ڈپٹی چیف منسٹر نے کرناٹک میں تلگو عوام کے درمیان مہم چلانے کیلئے وہاں کیمپ کیا تھا۔ چیف منسٹر تلنگانہ کے چندر شیکھر راؤ نے ایچ ڈی دیوے گوڑا کی تائید کی تھی۔

TOPPOPULARRECENT