Saturday , July 21 2018
Home / کھیل کی خبریں / جنوبی اور شمالی کوریا ایک ہی پرچم تلے مارچ کیلئے تیار

جنوبی اور شمالی کوریا ایک ہی پرچم تلے مارچ کیلئے تیار

 

سیول۔18 جنوری (سیاست ڈاٹ کام )جنوبی کوریا اور شمالی کوریا سرمئی اولمپکس میں ایک ہی متحدہ پرچم تلے مارچ کرنے پر متفق ہوگئے ہیں۔انڈیپنڈنٹ کی رپورٹ کے مطابق جنوبی کوریا کے اتحاد کے وزیر نے کہا کہ دونوں ممالک نے سرحدی گاؤں پنمنجوم میں ہونے والے مذاکرات میں معاہدے کو حتمی شکل دے دی ہے۔انہوں نے کہا کہ پیونچینگ میں ہونے والی تقریب میں دونوں ممالک کے ایتھلیٹس ایک ساتھ ان کے خطے کو نمایاں کرنے والے متحدہ پرچم تلے مارچ کریں گے۔کوریائی ممالک کے اس اقدام کے لیے انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کی منظوری کی ضرورت ہے جس سے رواں ہفتے مشاورت کی جائے گی۔دونوں ممالک کے درمیان ویمن آئس ہاکی کی ٹیم کو مشترکہ طور پر میدان میں اتارنے پر بھی اتفاق ہوگیا ہے جو خطے میں تاریخ رقم کرے گا۔خیال رہے کہ اولمپکس کی تاریخ میں یہ پہلا موقع ہوگا جب کوریا کی متحدہ ٹیم کسی کھیل میں نظر آئے گی۔قبل ازیں شمالی کوریا کی جانب سے 230 افراد پر مشتمل چیئرنگ اسکواڈ بھیجنے کا اعلان کیا گیا تھا جن کی جنوبی کوریا میں آمد 25 جنوری سے شروع ہوگی۔10 جنوری کو دونوں ممالک کے درمیان ہوئے مذاکرات میں شمالی کوریا نے اپنی ٹیم کو سرمئی اولمپک میں شرکت کے لیے بھیجنے کا اعلان کیا تھا۔مذاکرات کے دوران دونوں ممالک نے فروری 2016 سے منقطع عسکری مذکرات کو ملٹری ہاٹ لائن میں بحال کرنے کا بھی فیصلہ کرلیا تھا۔شمالی کوریا نے 1998 میں جنوبی کوریا میں منعقدہ سرمئی گیمز کا بائیکاٹ کرتے ہوئے اپنی ٹیم کو نہیں بھیجا تھا تاہم اس مرتبہ اولمپک انتظامیہ اور سول حکومت ہمسایہ ملک کو اگلے ماہ شروع ہونے والے امن اولمپکس گیمز میں شریک دیکھنا چاہتی تھی۔شمالی کوریا کے رہنما کم جون ان کی جانب سے نئے سال کے پہلے خطاب سے قبل اپنی ٹیم کو ان گیمز میں شرکت کے لیے بھیجنے کے حوالے سے کوئی ارادہ ظاہر نہیں کیا گیا تھا۔مشترکہ اعلامیے میں کہا گیا کہ شمالی کوریا اپنے قومی اولمپک کمیٹی کے وفد سمیت ایتھلیٹس، چیئرلیڈرز، آرٹسٹ، تماشائی، تائیکوانڈو کی ایک ٹیم اور پریس کے وفد کو ہمسایہ ملک بھیجے گا جبکہ جنوبی کوریا اس ٹیم کو تمام ضروری سہولیات اور مراعات فراہم کرے گا۔

TOPPOPULARRECENT