Friday , September 21 2018
Home / جن لوک پال بِل پر سالیسٹر جنرل کے نقطہ نظر سے لاپرواہی

جن لوک پال بِل پر سالیسٹر جنرل کے نقطہ نظر سے لاپرواہی

نئی دہلی 7 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) جن لوک پال بِل کے بارے میں سالیسٹر جنرل کی رائے کی پرواہ کئے بغیر چیف منسٹر اروند کجریوال نے آج کہاکہ وہ اِس قانون سازی کے مرکز سے مطابقت پیدا کئے بغیر منظوری کے منصوبوں پر لیفٹننٹ گورنر کو مکتوب روانہ کریں گے۔ ایک دن قبل سالیسٹر جنرل موہن پرسارن نے لیفٹننٹ گورنر نجیب جنگ کو جن لوک پال بِل پر اپنی را

نئی دہلی 7 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) جن لوک پال بِل کے بارے میں سالیسٹر جنرل کی رائے کی پرواہ کئے بغیر چیف منسٹر اروند کجریوال نے آج کہاکہ وہ اِس قانون سازی کے مرکز سے مطابقت پیدا کئے بغیر منظوری کے منصوبوں پر لیفٹننٹ گورنر کو مکتوب روانہ کریں گے۔ ایک دن قبل سالیسٹر جنرل موہن پرسارن نے لیفٹننٹ گورنر نجیب جنگ کو جن لوک پال بِل پر اپنی رائے سے واقف کروادیا ہے کہ مرکز کے لوک پال بِل سے مطابقت پیدا کئے بغیر ایسے بِل کی منظوری غیرقانونی ہوگی۔ چیف منسٹر نے کہاکہ حکومت کے نقطہ نظر سے لیفٹننٹ گورنر کو واقف کروائیں گے۔ اِس مسئلہ پر اُنھیں ایک مکتوب روانہ کریں گے۔ منیش سیسوڈیا نے کہاکہ حکومت اِس مسئلہ کا جائزہ لے گی۔ تاہم اِس موقف کا اعادہ کیاکہ اسمبلی اور منتخبہ حکومت کو فیصلہ کرنے کا حق حاصل ہے۔ سینئر قانون داں پارٹی لیڈر پرشانت بھوشن نے کہاکہ بعض قواعد کیلئے حکومت کو قانون منظور کرنے سے پہلے مرکز کی اجازت حاصل کرنا ہوتی ہے لیکن اِسے غیرقانونی قرار دینے کے لئے کئی حقائق کو پیش نظر رکھنا ہوتا ہے۔ صدرجمہوریہ حقائق کی بنیاد پر ہی بِل کی منظوری کی اجازت دیتے ہیں۔ سالیسٹر جنرل نے کہا تھا کہ اُنھیں سیاست کی فکر نہیں ہے۔ اُنھوں نے دستوری موقف پر مبنی اپنی رائے دے دی ہے۔ اب یہ حکومت کا کام ہے کہ اِس پر غور کرے اور قانون کی منظوری دے۔ دریں اثناء عام آدمی پارٹی نے آج مطالبہ کیاکہ سالیسٹر جنرل کی جانب سے لیفٹننٹ گورنر کو جن لوک پال بِل کے بارے میں مراسلت کا مبینہ انکشاف ہونے کی تحقیقات کروائی جائیں۔ گورنر پر عام آدمی پارٹی نے ’’کانگریس کا ایجنٹ‘‘ ہونے کا الزام عائد کیا۔

پارٹی کے ترجمان آشوتوش نے کہاکہ یہ پہلی بار نہیں ہے جبکہ لیفٹننٹ گورنر کے دفتر سے اطلاعات کا افشاء ہوا ہے۔ اُنھوں نے اِس معاملہ کی تحقیقات کا مطالبہ کیا اور کہاکہ اِس افشاء سے لیفٹننٹ گورنر کی ساکھ مشتبہ ہوگئی ہے۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ عام آدمی پارٹی کو تشکیل حکومت کی دعوت دینے کے دن سے ہی لیفٹننٹ گورنر سے عام آدمی پارٹی کے تعلقات خوشگوار رہے ہیں۔ کجریوال نے اُنھیں ایک نفیس شخصیت قرار دیا تھا۔ کل لیفٹننٹ گورنر نجیب جنگ نے حکومت دہلی کی جن لوک پال بِل کی منظوری کی تجویز پر سالیسٹر جنرل سے دستوری موقف کی بنیاد پر رائے طلب کی تھی۔ عام آدمی پارٹی قائد اور سینئر قانون داں پرشانت بھوشن نے کہاکہ قانون کی ایک دفعہ کے تحت پیشگی اجازت حاصل کرنے کی بھی اگر ضرورت ہو تو اگر اِسے پیشگی اجازت کے لئے روانہ نہ کیا جائے تو اِسے غیر دستوری قرار نہیں دیا جاسکتا کیونکہ آخرکار صدرجمہوریہ اِسے منظوری دے دیتے ہیں۔ وہ طریقہ کار کے بارے میں بات چیت کررہے تھے جو قواعد کے تعین کے سلسلہ میں اختیار کیا جاتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT