Saturday , November 17 2018
Home / ہندوستان / جواہر لال نہرو یونیورسٹی کا پروفیسر جنسی ہراسانی کے الزام میں گرفتار، ضمانت پر رہا

جواہر لال نہرو یونیورسٹی کا پروفیسر جنسی ہراسانی کے الزام میں گرفتار، ضمانت پر رہا

نئی دہلی ۔ 20 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے پروفیسر اے جوہری کو آج چند طالبات کی جنسی ہراسانی کے الزام میں گرفتار کرلیا گیا اور اس کے کچھ ہی دیر بعد ایک عدالت نے ان کی ضمانت پر رہائی کے احکام جاری کردیئے۔ یونیورسٹی کے طلبہ اور پروفیسرس بشمول خواتین حقوق تنظیمیں احتجاجی مظاہرے کررہی تھیں اور جوہری کی گرفتاری کا مطالبہ کررہی تھیں جبکہ چند طالبات نے ان پر جنسی ہراسانی کا الزام عائد کیا تھا۔ دہلی پولیس کے ترجمان اعلیٰ دپیندر پھاٹک نے کہا کہ جوہری کی گرفتاری کے بعد ان سے وسنت کنج پولیس اسٹیشن میں ان سے تین گھنٹے تفتیش کی گئی اور انہیں ڈیوٹی مجسٹریٹ ریتو سنگھ کے سامنے پیش کیا گیا جنہوں نے انہیں 8 ایف آئی آرس میں سے ہر ایک پر 30 ہزار روپئے کی ضمانت پر رہائی کے احکام جاری کئے۔

TOPPOPULARRECENT