Thursday , December 14 2017
Home / ہندوستان / جواہر لال یونیورسٹی میں تلاشی کا اختتام

جواہر لال یونیورسٹی میں تلاشی کا اختتام

نجیب احمد کے روم میٹس سے پوچھ تاچھ باقی : پولیس
نئی دہلی۔ 20ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) دہلی کی پولیس نے جواہر لال نہرو یونیورسٹی کی عمارت کی جامع تلاشی لی ہے تاہم نجیب احمد کے بارے میں کوئی سراغ لگانے سے قاصر رہی۔ پولیس کے سینئر اسٹینڈنگ کونسل برائے حکومت دہلی راہول مہرا نے دہلی ہائیکورٹ کے اجلاس پر کہا کہ 4 طلباء جو نجیب کو زدوکوب کرنے کے سلسلے میں مشتبہ ہیں، لائیو ڈیٹیکٹر ٹسٹ کی فہرست میں شامل کئے جائیں گے تاکہ نجیب احمد کے لاپتہ ہوجانے کے بارے میں اور اس کے موجودہ پتہ کے بارے میں سراغ مل سکے۔ نجیب احمد 15 اکتوبر سے لاپتہ ہیں ۔ قبل ازیں ہاسٹل میں اے بی وی پی کے طلباء کے ساتھ 14 اکتوبر کی رات کو اس کی زبانی تکرار اور ہاتھا پائی ہوئی تھی۔ پولیس نے نجیب کے بارے میں کوئی اطلاع فراہم کرنے والے کیلئے 10 لاکھ روپئے کے انعام کا اعلان کیا ہے۔ دہلی ہائیکورٹ کے حکم پر گزشتہ ہفتہ جواہر لال نہرو یونیورسٹی کی جامع تلاشی لی گئی تاہم پولیس نجیب کے بارے میں کوئی بھی سراغ حاصل کرنے میں ناکام رہی۔

TOPPOPULARRECENT