Thursday , January 18 2018
Home / کھیل کی خبریں / جوکووچ کوآسٹریلین اوپن میں 14 واں مقام

جوکووچ کوآسٹریلین اوپن میں 14 واں مقام

 

میلبورن۔11 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) چھ مرتبہ کے چمپئن اور سابق عالمی نمبر ایک سربیا کے نوواک جوکووچ کو چوٹ کی وجہ سے گزشتہ سال کافی وقت میدان سے باہر رہنے کے سبب 2018 کے پہلے گرانڈ سلام آسٹریلین اوپن میں14 ویں سیڈ ملی ہے جبکہ موجودہ نمبر ایک اور دو رافیل نڈال اور راجر فیڈرر ٹاپ سیڈ کھلاڑی کے طور پر اتریں گے ۔اگلے ہفتے میلبورن میں شروع ہو رہے آسٹریلین اوپن میں سابق نمبر ون جوکووچ 14 ویں سیڈ کھلاڑی کے طور پر اتریں گے ۔منتظمین نے جمعرات کو ٹورنمنٹ کے ڈرا کا اعلان کیا جس میں اسپین کے نڈال کو ٹاپ سیڈ اور سوئٹزرلینڈ کے راجر فیڈرر کو دوسری سیڈ دی گئی ہے ۔ وہیں خواتین میں موجودہ نمبر ایک اور دو سمونا ہالیپ اور کیرولن ووزنیاکي کو بھی پہلی اور دوسری سیڈ دی گئی ہے ۔آسٹریلین اوپن میں سیڈ بنیادی طور پراے ٹی پی عالمی درجہ بندی کی بنیاد پر دی جاتی ہے ۔ ٹورنامنٹ میں اس مرتبہ اینڈی مرے ، کائی نشی کوری اور گزشتہ خاتون چمپئن سرینا ولیمز کے نہیں کھیلنے سے بھی سیڈ میں فرق آیا ہے ۔وہیں جوکووچ نے زخموں کے خدشات کو دور کر واپسی کی ہے ۔گرانڈ سلام میں خطاب کے دعویدار اور دوسری سیڈ سوئس ماسٹر فیڈرر خطاب کے دفاع کی شروعات سلووانیا کے ایلاز بیڈین کے خلاف کریں گے جبکہ رنر اپ نڈال ڈرا میں وکٹر ایسٹریلا برگوس کے خلاف اتریں گے ۔مردوں کے ڈرا میں تیسری سیڈ گریجاردمتروو کو دی گئی ہے جو کوالیفائنگ سے کھیلیں گے جبکہ جرمنی کے الیکساندر جوئریو کو چوتھی سیڈ دی گئی ہے جو اٹلی کے تھامس فابیانوکے خلاف اپنا پہلا مقابلہ کھیلیں گے اگرچہ 2014 کے چمپئن سوئٹزرلینڈ کے اسٹنسلاس واورنکا کے سرجری کے بعد واپس آنے سے ان کے لیے ڈرا کافی مشکل ہو گیا ہے ۔وہیں دلچسپ ہے کہ چھ مرتبہ کے چمپئن جوکووچ کو اس مرتبہ 14 ویں سیڈ دی گئی ہے ۔کہنی کی چوٹ کی وجہ سے باہر رہے سربیائی کھلاڑی فی الحال عالمی درجہ بندی میں کافی کھسک چکے ہیں اور میلبورن میں امریکہ کے ڈونلڈ ینگ کے خلاف مہم شروع کریں گے ۔دفاعی چمپئن امریکہ کی سرینا ولیمز کے سال کے پہلے گرانڈ سلام سے ہٹنے کی خبروں کے بعد جہاں شائقین کو مایوسی ہوئی تو وہیں ان کی غیر موجودگی نے نئے کھلاڑیوں کے لئے سال 2018 میں آسٹریلین اوپن کا خطاب حاصل کرنے کے دروازے کھول دیئے ہیں۔سرینا نے سال2017 میں آٹھ ہفتے کے حمل کے ساتھ آسٹریلین اوپن کا خطاب جیتا تھا اور کیریئر میں23 سنگلز گرانڈ سلام کی کامیابی بھی اپنے نام کی۔سابق ٹینس اسٹار بورس بیکر نے موجودہ حالات کے پیش نظر کہا کہ اس سال آسٹریلین اوپن میں صورتحال کافی مضحکہ خیز بن گئی ہے لیکن ساتھ ہی سرینا کے نہ ہونے پر نئی کھلاڑیوں کو خود کو ثابت کرنے کا موقع رہے گا۔انہوں نے کہا کہ مجھے لگتا ہے کہ یہ موقع ہے نیا سوپر اسٹار پیدا کرنے کا۔سمونا ہالیپ فی الحال نمبر ون ہیں لیکن فی الحال چار سے پانچ اور لڑکیاں ہیں جو کھیل میں اپنا دبدبہ قائم کر رہی ہیں۔انہوں نے کہا کہ میں 10 نام بتا سکتا ہوں جو آسٹریلین اوپن جیت سکتی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT