Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / جگن اور ساتھیوں کی 863 کروڑ روپئے مالیتی جائیدادیں ضبط

جگن اور ساتھیوں کی 863 کروڑ روپئے مالیتی جائیدادیں ضبط

نئی دہلی 19 اگسٹ (پی ٹی آئی) انسداد رقمی ہیر پھیر کے مقدمات کی سماعت کرنے والی ایک خصوصی عدالت نے وائی ایس آر کانگریس کے لیڈر جگن موہن ریڈی اور ان کے بعض ساتھیوں کی 863 کروڑ روپئے مالیتی جائیدادوں کو آج قرق (ضبط) کرلیا۔ آندھراپردیش میں ایک انفراسٹرکچر پراجکٹ میں مبینہ رشوت ستانی اور رقمی ہیر پھیر کی تحقیقات کے ضمن میں یہ قدم اُٹھایا گیا ہے۔ انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ (ای ڈی) کی طرف سے مارچ میں جاری کردہ ایک نوٹس پر عدالت نے یہ احکام جاری کئے ہیں۔ اس نوٹس میں جگن اور نما گڈا پرساد کے خلاف علیحدہ نوٹسیں جاری کی گئی تھیں اور الزام عائد کیا گیا تھا کہ حکومت آندھراپردیش نے (جب جگن کے والد وائی ایس راج شیکھر ریڈی چیف منسٹر تھے) واڈاریوو اور نظام پٹنم صنعتی راہداری (وانپک) میں ان کی کمپنیوں کی غیرقانونی طور پر مدد کی تھی۔ سی بی آئی چارج شیٹ میں کہا گیا ہے کہ اراضیات کی فراہمی کے لئے نما گڈا پرساد کو 1426.17 کروڑ روپئے کے غیر قانونی فوائد پہونچائے گئے تھے جس کے بدلے میں پرساد کی طرف سے جگن اور ان کی کمپنیوں کو 854.54 کروڑ روپئے کے فوائد پہونچائے گئے تھے۔

TOPPOPULARRECENT