Tuesday , December 12 2017
Home / شہر کی خبریں / جگن موہن کی عدالت میں شخصی حاضری سے استثنیٰ درخواست مسترد

جگن موہن کی عدالت میں شخصی حاضری سے استثنیٰ درخواست مسترد

صدر وائی ایس آر کانگریس پارٹی و قائد اپوزیشن اے پی کو عدالت میں ناکامی کا سامنا
حیدرآباد ۔ 23 ۔ اکٹوبر : ( سیاست نیوز ) : صدر وائی ایس آر کانگریس پارٹی و قائد اپوزیشن آندھرا پردیش قانون ساز اسمبلی مسٹر وائی ایس جگن موہن ریڈی کو آج سی بی آئی عدالت میں ناکامی سے دوچار ہونا پڑا ۔ بتایا جاتا ہے کہ غیر مجاز املاک کیس میں شخصی حاضری سے استثنیٰ دینے کی اپیل کرتے ہوئے پیش کردہ درخواست کو سی بی آئی کورٹ نے آج مسترد کردیا اور یہ ریمارک کیا کہ پدیاترا کا عدالت میں شخصی حاضری سے کوئی تعلق نہیں رہتا اور نہ ہی عدالت میں شخصی حاضری کے باعث مجوزہ یاترا پر اس کا کوئی منفی ردعمل نہیں رہے گا ۔ مزید بتایا جاتا ہے کہ غیر قانونی و غیر مجاز املاک ( اثاثہ جات ) کی تحقیقات میں ایک حصہ کے طور پر ہر جمعہ کو سی بی آئی کورٹ میں مسٹر وائی ایس جگن موہن ریڈی کی حاضری کو ضروری قرار دیا گیا تھا ۔ لیکن ریاست گیر سطح پر 2 نومبر سے شروع کی جانے والی مجوزہ پدیاترا کے پیش نظر آئندہ چھ ماہ تک کے لیے ہر جمعہ کو سی بی آئی کورٹ میں شخصی حاضری سے استثنیٰ دینے کی اپیل کرتے ہوئے سی بی آئی کورٹ میں مسٹر وائی ایس جگن موہن ریڈی نے درخواست پیش کی تھی ۔ بتایا جاتا ہے کہ اس درخواست پر آج سی بی آئی کورٹ میں سی بی آئی کے وکیل اور وائی ایس جگن موہن ریڈی کے وکیل کے مابین انتہائی سخت و گرما گرم کے ساتھ ساتھ الزامات و جوابی الزامات پر مبنی مباحث ہوئے اور سی بی آئی کے وکیل نے اس بات کا استدلال پیش کیا کہ اگر وائی ایس جگن موہن ریڈی کو ہر جمعہ سی بی آئی کورٹ میں شخصی حاضری سے چھ ماہ طویل پدیاترا کے لیے استثنیٰ دیئے جانے کی صورت میں تحقیقات میں کافی تاخیر ہوسکتی ہے ۔ جس کو پیش نظر رکھتے ہوئے سی بی آئی کورٹ نے مسٹر وائی ایس جگن موہن ریڈی کی جانب سے شخصی حاضری سے استثنیٰ کے لیے پیش کردہ درخواست کو مسترد کردیا ۔ جس کی وجہ سے مسٹر وائی ایس جگن موہن ریڈی کو ناکامی سے دوچار ہونا پڑا ۔۔

TOPPOPULARRECENT