جہیز کیلئے ہراسانی علحدہ واقعات میں دو خواتین کی خودکشی

حیدرآباد /16 فروری ( سیاست نیوز ) سائبرآباد پولیس حدود میں زائد جہیز کیلئے ہراسانی و اذیت رسانی کا شکار دو خواتین نے خودکشی کرلی ۔ یہ واقعہ ونستھلی پورم اور چندانگر پولیس حدود میں پیش آئے ۔ ونستھلی پورم پولیس کے مطابق 28 سالہ سواتی جو ونستھلی پورم علاقہ کے ساکن سنتوش کمار کی بیوی تھی ۔ یہ خاتون 14 فروری کے دن اپنے مکان میں بے ہوشی کی حالت میں دستیاب ہوئی ۔ جس کو فوری طور پر ہاسپٹل منتقل کیا گیا جہاں علاج کے دوران 15 فروری کے دن وہ فوت ہوگئی ۔ پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ سمجھا جارہا ہے کہ سواتی نے نامعلوم زہریلی دوا کا استعمال کرلیا ہوگا ۔ تاہم پولیس نے قطعی طور پر کوئی بات نہیں بتائی اور کہا کہ چونکہ اس خاتون کو زائد جہیز کیلئے شوہر اور سسرالی رشتہ داروں کی جانب سے ہراسانی کا سامنا تھا ۔ اس وجہ سے خاتون نے خودکشی کرلی ہوگی ۔ چندانگر پولیس کے مطابق 30 سالہ وانی جو پاپی ریڈی نگر چندا نگر علاقہ کے ساکن پرشانت کی بیوی تھی ۔ اس خاتون نے کل رات پھانسی لیکر خودکشی کرلی ۔ وانی اور پرشانت کی شادی سال 2010 میں ہوئی تھی اور اس خاتون کو شادی کے وقت 5 لاکھ نقد رقم اور گھریلو اشیاء ،ضروری ساز و سامان دیا گیا تھا ۔ تاہم گذشتہ چند ماہ سے اس خاتون کو کافی ہراساں و پریشان کیا جارہا تھا ۔ جس سے دلبرداشتہ ہوکر اس نے خودکشی کرلی ۔

TOPPOPULARRECENT