Tuesday , December 18 2018

جہیز ہراسانی سے تنگ آکر خاتون کی خودکشی

حیدرآباد 27 فروری (سیاست نیوز) سائبرآباد کے علاقہ کندکور میں ایک خاتون نے سسرالی رشتہ داروں کی اذیت رسانی سے تنگ آکر خودسوزی کرلی۔ جس کی شادی 10 ماہ قبل ہوئی تھی۔ سسرالی رشتہ دار جو خاتون کے مائیکے کی ایک تقریب میں شرکت کے لئے آئے تھے، جہیز کے مسئلہ پر خاتون کے والدین کی رسوائی کی جس سے تنگ آکر 20 سالہ خاتون شویتا نے خودسوزی کرلی۔ بتایا جاتا ہے کہ شویتا جس کی شادی تمائی پلی علاقہ کے ساکن شیوایا سے 10 ماہ قبل ہوئی تھی، شادی کے وقت خواہش کے مطابق طلائی زیورات و ضروری سازوسامان اور نقد رقم دی گئی تھی۔ تاہم شادی کے دو ماہ بعد ہی سے شیوتا کو ہراساں کیا جانے لگا اور اذیت پہونچائی جارہی تھی۔ 22 فروری کو شویتا کے چچا نے اپنے بچے کی تقریب کرتے ہوئے اس میں شویتا اور اس کے سسرالی رشتہ داروں کو بھی مدعو کیا تھا۔ تقریب میں شرکت کے بعد شویتا کے سسرالی رشتہ داروں نے بحث و تکرار کرتے ہوئے اپنی بہو کے مائیکے والوں کی دلآزاری کی جس سے متوفی خاتون دلبرداشتہ ہوگئی۔ تاہم گھر پہونچنے کے بعد شویتا کو کافی بُرا بھلا کہا گیا۔ جس سے تنگ آکر 23 فروری کو صبح کی اولین ساعتوں میں شویتا نے خودسوزی کرلی۔ جس کی کل رات علاج کے دوران ہاسپٹل میں موت ہوگئی۔ پولیس مصروف تحقیقات ہے۔

TOPPOPULARRECENT