Thursday , November 23 2017
Home / ہندوستان / جیویلرس کی ہڑتال 36 ویں دن بھی جاری

جیویلرس کی ہڑتال 36 ویں دن بھی جاری

نئی دہلی 6 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) جیویلرس اور صرافہ تاجرین اور کاریگروں کی ملک کے مختلف حصوں میں غیر معینہ مدت کی ہڑتال آج بھی جاری رہی۔ بجٹ میں طلائی زیورات پر ایک فیصد اکسائز ڈیوٹی واپس لینے کا مطالبہ کرتے ہوئے 2 مارچ کو یہ ہڑتال شروع کی گئی اور اب تک اِس کے ختم ہونے کے کوئی آثار نظر نہیں آرہے ہیں۔ دہلی کے بشمول ملک کے مختلف حصوں میں جیویلری شاپس بند رہے۔ کولکتہ اور ممبئی میں بھی دوکانات 36 ویں دن سنسان نظر آرہی تھیں۔ تاہم ٹاملناڈو میں جیویلری شورومس حسب معمول کھلے رہے۔ مرکز نے جیویلرس کے مطالبات کا جائزہ لینے کے لئے سابق چیف اکنامک اڈوائزر اشوک لہری کی زیرقیادت پہلے ہی یہ پیانل تشکیل دیا ہے۔
پناما پیپرس : فوری نتیجہ اخذ کرنا ٹھیک نہیں: ریزرو بینک
نئی دہلی 6 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) پناما پیپرس کے تعلق سے فوری طور پر کسی نتیجہ پر پہونچنے کے بارے میں خبردار کرتے ہوئے ریزرو بینک نے آج کہاکہ سب سے پہلے یہ معلوم کرنا ہوگا کہ تمام شواہد قانونی طور پر درست ہیں یا نہیں۔ پناما پیپرس میں تقریباً 500 ہندوستانی شہریوں بشمول فلمی شخصیتوں اور صنعتکاروں کی ایک فہرست کا انکشاف کیا ہے جنھوں نے مبینہ طور پر اپنی دولت پناما میں واقع ایک کمپنی کے توسط سے جمع کرائی ہے اور ٹیکس سے بچا جارہا ہے۔ حکومت نے اس ضمن میں ٹیکس فورس قائم کی ہے اور ریزرو بینک بھی اس کا ایک حصہ ہے۔ ڈپٹی گورنر ریزرو بینک آف انڈیا ایس ایس مندرا نے آج اسوچام کے ایک پروگرام کے موقع پر کہاکہ فوری طور پر کوئی نتیجہ اخذ کرنا مناسب نہیں ہوگا۔ پہلے تمام تفصیلات کا جائزہ لینا ہوگا اور ہم پوری ٹیم کے ساتھ مل کر شواہد اکٹھے کررہے ہیں۔ اِس کے بعد ہی کسی نتیجہ پر پہونچا جاسکے گا۔

TOPPOPULARRECENT