Thursday , December 14 2017
Home / ہندوستان / جی ایس ٹی ضمنی قانون سازیوں کو کابینہ کی منظوری

جی ایس ٹی ضمنی قانون سازیوں کو کابینہ کی منظوری

یکم جولائی سے ایک ملک ایک ٹیکس نظام کے نفاذ کی کوششوں میں پیشرفت
نئی دہلی ۔20 مارچ ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی کابینہ نے گڈس اینڈ سرویسیس ٹیکس (جی ایس ٹی ) پر عمل آوری کیلئے آج چار ضمنی قانون سازیوں کو منظوری دیدی جنھیں اس ہفتہ پارلیمنٹ میں پیش کیا جائیگا تاکہ ٹیکس اصلاحات کے یکم ؍ جولائی سے نفاذ کو یقینی بنایا جاسکے ۔ پارلیمنٹ کی طرف سے ان قانون سازیوں اور ایک علحدہ قانون سازی کی ریاستی اسمبلیوں میں منظوری کے بعد ایک ملک ایک ٹیکس قاعدہ کے نفاذ سے متعلق قانون سازی کا عمل مکمل ہوجائے گا ۔ جس کے ساتھ ہی اکسائز ڈیوٹی اور سرویس ٹیکس جیسے مرکزی محصول کے علاوہ ویاٹ جیسے ریاستی محصول کا انضمام عمل میں آئے گا اور سارے ملک میں یکساں ٹیکس کا نفاذ ہوگا ۔ جی ایس ٹی کونسل پہلے ہی 5 ، 12، 18 اور 28 یا اس سے زائد اضافہ محصول سے متعلق چار زمروں پر مبنی ٹیکس سلابس کو منظوری دے چکی ہے جس کے مطابق اشیائے تعیش جیسے لگژیری کاروبار ، شراب اور قیمتی مشروبات اور تمباکو سے تیارشدہ اشیاء پر زائد ٹیکس عائد کئے جائیں گے ۔ مختلف اشیاء اور خدمات کو مختلف سلابس میں شامل کرنے کا عمل آئندہ ماہ سے شروع کرنے کیلئے کام جاری ہے ۔ جی ایس ٹی کے نفاذ سے ریاستوں کو ہونے والے مالیاتی خسارہ کا معاوضہ ادا کرنے نیز اشیاء اور خدمات کے اندرونی ریاست اور ریاستوں کے باہر منتقلی پر نئے ٹیکس عائد کرنے کیلئے ایک بل اس ہفتہ پارلیمنٹ میں پیش کیا جائے گا ۔ اس قانون سازی کو بالواسطہ محاصل کے معاملہ میں آزاد ہند کی تاریخ میں سب سے بڑی اصلاح قرار دیا جارہا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT