Thursday , December 14 2017
Home / شہر کی خبریں / جی ایچ ایم سی انتخابات میں کامیابی کے لئے ٹی آر ایس کی دھاندلیاں

جی ایچ ایم سی انتخابات میں کامیابی کے لئے ٹی آر ایس کی دھاندلیاں

جمہوریت کے خون کے مترادف، صدر تلنگانہ پی سی سی اتم کمار ریڈی کا خطاب
حیدرآباد /6 جنوری (سیاست نیوز) تلنگانہ کی ٹی آر ایس حکومت جی ایچ ایم سی انتخابات میں کامیابی کے لئے بڑے پیمانے پر بے قاعدگیاں اور جمہوریت کا خون کر رہی ہے۔ آج شام گاندھی بھون میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صدر تلنگانہ پردیش کانگریس اتم کمار ریڈی نے یہ بات کہی۔ اس موقع پر سابق رکن اسمبلی ایم ششی دھر ریڈی، ترجمان اعلی ڈی شرون کمار اور دیگر بھی موجود تھے۔ اس موقع پر انتخابی پوسٹر جاری کرتے ہوئے اتم کمار ریڈی نے کہا کہ ٹی آر ایس نے اپنے انتخابی منشور میں مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات فراہم کرنے اور شاد نگر کے جلسہ عام میں اقتدار حاصل ہونے کے اندرون چار ماہ یہ تحفظات فراہم کرنے کا ادعا کیا تھا، لیکن اب تک ٹی آر ایس حکومت اپنے وعدہ کو پورا نہیں کرسکی۔ انھوں نے واٹس اپ پر مسیج جاری کرتے ہوئے چیف منسٹر تلنگانہ سے استفسار کیا کہ وہ اپنے وعدہ کو کب پورا کریں گے؟۔ انھوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے سرکاری تقررات کے لئے اعلامیہ جاری کیا جا رہا ہے، مگر مسلمانوں سے کئے گئے تحفظات کے وعدہ کو نظرانداز کردیا گیا۔ انھوں نے کہا کہ گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے انتخابات میں کامیابی کے لئے من مانی فیصلہ کرتے ہوئے میونسپل قوانین میں ترمیم کی گئی ہے اور تشہیر کے لئے عوامی فنڈ کا بیجا استعمال کیا جا رہا ہے۔ انھوں نے بتایا کہ انھوں نے الیکشن کمیشن جی ایچ ایم سی اور سکریٹری بلدی نظم و نسق کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے ہورڈنگس، پوسٹرس اور فلیکسی کو فوراً نکالنے کا مطالبہ کیا ہے، لیکن بلدی عملہ کی جانب سے کانگریس اور دیگر اپوزیشن جماعتوں کے پوسٹرس نکالے جا رہے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ کانگریس دور حکومت میں کئے گئے ترقیاتی کاموں کو ٹی آر ایس حکومت اپنا کارنامہ بتاکر عوام کو گمراہ کر رہی ہے، مگر حیدرآباد کے عوام واقف ہیں کہ یہ سارے ترقیاتی اقدامات کانگریس دور حکومت میں کئے گئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT