Wednesday , September 19 2018
Home / شہر کی خبریں / جی ایچ ایم سی سے ووٹر شناختی کارڈ کی اجرائی،تمام سرکلس میں یکم مئی سے سہولت کی فراہمی

جی ایچ ایم سی سے ووٹر شناختی کارڈ کی اجرائی،تمام سرکلس میں یکم مئی سے سہولت کی فراہمی

حیدرآباد ۔ 14 ۔ اپریل : ( سیاست نیوز) : تاحال ای سیوا اور می سیوا سنٹرس کے ذریعہ جاری کیے جانے والے ووٹرس شناختی کارڈس ( ایپک ) اب عنقریب گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے سرکل دفاتر میں بھی جاری کئے جائیں گے کیوں کہ اس بات کی شکایات موصول ہورہی تھیں کہ مذکورہ مراکز کی جانب سے ایپک ووٹر شناختی کارڈس کی اجرائی میں زائد رقم کی وصولی اور غیر متعلقہ افراد کو جاری کئے جارہے ہیں ۔ یکم مئی تا اواخر ماہ عظیم تر بلدیہ کی حدود میں رہنے والے افراد جو تاحال ووٹر شناختی کارڈ حاصل نہیں کئے ہیں ان کے ناموں کے اندراج کے لیے خصوصی مہم چلائی جائے گی اور قبل ازیں جن افراد نے اپنے ناموں کا اندراج کرایا تھا ان میں شناختی کارڈس فراہم کرنے کے لیے ای آر اوز کے حلقوں میں سنٹرس قائم کئے جائیں گے اور رنگین ایپک کارڈس کی اجرائی فی کارڈ کے لیے 25 روپئے تو سفید سیاہ فی کارڈ کے لیے 10 روپئے وصول کئے جائیں گے ۔ مگر اس معاملہ میں حتمی فیصلہ کا انتظار ہے ۔ واضح ہو کہ ووٹرس کا اندراج ہو یا غلط ناموں کے اخراج اور کارڈس میں غلطیوں کی تصحیح یا پتہ کی تبدیلی یہ تمام اختیارات اگرچہ ای آر اوز کو ہیں مگر کارڈس کی اجرائی ان کی جانب سے نہیں ہورہی ہے یہاں تک کہ بلدیہ شعبہ عوامی خدمات سے بھی جاری نہیں کئے جارہے ہیں بلکہ مختص رقم کے عوض می سیوا اور اس سیوا سنٹرس کے ذریعہ جاری کئے جارہے ہیں اور ان سنٹرس کی ذمہ داری ہے کہ وہ صحیح شناخت بتانے پر ہی ووٹرس آئی کارڈس جاری کریں مگر مذکورہ سنٹرس کی جانب سے اس شرط کو بالائے طاق رکھتے ہوئے کارڈس جاری کئے جارہے ہیں اور کارڈس کی اجرائی کے لیے مختص رقم کے بجائے زائد رقم سفید سیاہ کارڈ کے لیے 30 روپئے اور رنگین کارڈ کے لیے 50 ۔ 60 روپئے وصول کرنے کی شکایات مل رہی ہیں اور ان شکایات کے مد نظر ای آر اوز کی نگرانی میں بلدیہ کے دفاتر میں جاری کرنے کے انتظامات کئے جارہے ہیں ۔ اور آئندہ ماہ یکم تا 31 مئی جدید ناموں کے اندراج کے لیے خصوصی مہم چلائی جائے گی ۔۔

TOPPOPULARRECENT