Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / حالت نشہ میں ڈرائیونگ پر 3 افراد کو سزائے قید

حالت نشہ میں ڈرائیونگ پر 3 افراد کو سزائے قید

ایس ایم بلال

ایس ایم بلال
حیدرآباد۔18 ڈسمبر : نامپلی کریمنل کورٹ نے حالت نشہ میں گاڑی چلانے والوں کے خلاف فیصلہ سناتے ہوئے ایک شخص کو دو ماہ اور دیگر دو کو ایک ماہ کی سزا سنائی ۔ حیدرآباد ٹریفک پولیس ’’حالت ِنشہ میں ڈرائیونگ‘‘ مہم میں شدت پیدا کرتے ہوئے قانون کی خلاف ورزی کرنے والے افراد کو گرفتار اور بروقت چارج شیٹ داخل کررہی ہے جس کے نتیجہ میں عدالت کی جانب سے سخت سزا دی جارہی ہے ۔آج نامپلی کریمنل کورٹ کی تیسری ایڈیشنل چیف میٹرو پولیٹن مجسٹریٹ نے نامپلی پولیس ٹریفک پولیس کی جانب سے گرفتار کئے گئے بال ریڈی کو دو ماہ کی سزا سنائی جبکہ نلہ کنٹہ ٹریفک پولیس کی جانب سے گرفتار کئے گئے راجیش اور ملک پیٹ ٹریفک پولیس کی جانب سے گرفتار کئے گئے محی الدین کو ایک ماہ کی سزا سنائی ۔ سال 2011 میں شروع کی گئی اس مہم کے تحت گذشتہ چار سال میں 39998 مقدمات درج کئے گئے ہیں جس میں مختلف پیشوں سے وابستہ افراد بشمول خواتین شامل ہیں ۔ اس مہم میںگاڑی چلانے والوںکابریتھ انیلائزر ٹسٹ کیا جاتا ہے۔ اس کے ذریعہ 30 تا 300 سے زائد ملی گرام شراب خون میں موجود ہونے کا پتہ چلتا ہے اور اس مقدار کی بنیاد پر عدالت سزا سناتی ہے ۔ اس مہم کے تحت گرفتار کئے جانے والے افراد میں خانگی ملازم سرفہرست ہیںجبکہ تاجر پیشہ افراد دوسرے نمبر پر ہیں۔ ڈرنکن ڈرائیونگ مہم سے حیدرآباد سٹی پولیس نے سال 2011 سے سال 2014 تک 6 کروڑ 47 لاکھ ،77 ہزار 227 روپئے وصول کئے ہیں ۔ جبکہ جملہ 3381 افراد کو جیل کی سزا سنائی گئی ہے ۔اس مہم کے تحت جاریہ سال 13 خاتون ڈرائیورس کو گرفتار کیا گیا ہے جبکہ سال 2013 میں 12 ،2012 میں 4 ، اور سال 2001 میں ایک کو گرفتار کیا گیا تھا ۔ حیدرآباد ٹریفک پولیس ڈرنکن ڈرائیونگ میں ملوث افراد کے خلاف اپنا شکنجہ کستے ہوئے ان کی گرفتاری کے فوری بعد ہی چارج شیٹ داخل کررہی ہے اور یہ کارروائی بڑے پیمانے پر کی جارہی ہے۔ حیدرآباد ٹریفک پولیس کے اعلی عہدیداروں کی راست نگرانی میں یہ مہم کامیاب طور پر چلائی جارہی ہے جس کے نتیجہ میں سڑک حادثات میں کمی ہورہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT