Tuesday , July 17 2018
Home / شہر کی خبریں / حج مصارف کی پہلی قسط کی ادائیگی 12 فبروری آخری تاریخ ‘ مزید توسیع نہیں ہوگی

حج مصارف کی پہلی قسط کی ادائیگی 12 فبروری آخری تاریخ ‘ مزید توسیع نہیں ہوگی

حیدرآباد/9فبروری( سیاست نیوز) حج 2018 کے منتخب عازمین کیلئے مصارف کی پہلی قسط ادا کرنے کی آخری تاریخ 12 فبروری مقرر ہے جس میں مزید توسیع کا امکان نہیں ہے۔ ایکزیکیٹو آفیسر تلنگانہ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ تمام منتخب عازمین 12 فبروری تک بہر صورت مصارف کی پہلی قسط 81000 روپئے جمع کردیں۔ جو عازمین مقررہ تاریخ تک رقم جمع نہیں کریں گے ان کا انتخاب منسوخ کردیا جائیگا۔ انہوں نے بتایا کہ تقریباً 80 فیصد عازمین نے ابھی تک پہلی قسط ادا کردی ہے۔ دوسری طرف 42 عازمین حج نے سفر منسوخ کرنے کا فیصلہ کرکے حج کمیٹی میں درخواست داخل کی ہے ۔ 42 عازمین حج کے علاوہ ملک بھر سے منسوخ ہونے والی تعداد کو سنٹرل حج کمیٹی یکجا کرتے ہوئے مسلم آبادی کے اعتبار سے ریاستوں میں تقسیم کرتی ہے جس کی بنیاد پر ویٹنگ لسٹ کے عازمین کا انتخاب کیا جاتا ہے۔ تلنگانہ حکومت گزشتہ سال کی طرح جاریہ سال بھی زائد کوٹہ حاصل کرنے کی کوشش کریگی۔ پروفیسر شکور نے کہا کہ پہلی قسط کی رقم بینک چالان یا ای پیمنٹ کے ذریعہ ادا کی جاسکتی ہے۔ حج کمیٹی آف انڈیا کے اکاؤنٹ میں رقم ڈپازٹ کرتے وقت پیان کارڈ کی پیشکشی لازمی ہوگی یا پھر فارم 60 کی خانہ پُری کرنی ہوگی۔ اسٹیٹ بینک آف انڈیا یا یونین بینک آف انڈیا کی کسی برانچ میں جہاں کور بینکنگ کی سہولت حاصل ہے پہلی قسط جمع کی جاسکتی ہے۔ ڈیبٹ کارڈ، کریڈٹ کارڈ یا انٹر نیٹ بینکنگ کیلئے حج کمیٹی کی ویب سائیٹ پر ای پیمنٹ آپشن استعمال کیا جاسکتا ہے۔ پروفیسر شکور نے کہا کہ رقم کی ادائیگی کے بعد بینک رسید کی ایک کاپی دفتر حج کمیٹی میں داخل کی جائے۔ عام زمرہ کے منتخب عازمین اپنا اصل پاسپورٹ ، ایک فوٹو، میڈیکل اسکریننگ اور فٹنس سرٹیفکیٹ بھی داخل کریں۔

TOPPOPULARRECENT