Wednesday , June 20 2018
Home / ہندوستان / حریت کانفرنس کی ریالی کیخلاف تحدیدات

حریت کانفرنس کی ریالی کیخلاف تحدیدات

سرینگر۔/21مئی، ( سیاست ڈاٹ کام ) جموں و کشمیر کے گرمائی دارالحکومت کے 6پولیس اسٹیشنس کے حدد میں حکام نے آج تحدیدات عائد کردیئے تاکہ حریت کانفرنس کے دو قائدین کی برسی کے موقع پر ریالی نکالنے کی کوشش کو ناکام بنادیا جائے۔ پولیس عہدیدار نے بتایا کہ قدیم شہر کے علاقہ عید گاہ میں حریت کانفرنس کی ریالی سے امن و قانون کا مسئلہ پیدا ہونے کا ان

سرینگر۔/21مئی، ( سیاست ڈاٹ کام ) جموں و کشمیر کے گرمائی دارالحکومت کے 6پولیس اسٹیشنس کے حدد میں حکام نے آج تحدیدات عائد کردیئے تاکہ حریت کانفرنس کے دو قائدین کی برسی کے موقع پر ریالی نکالنے کی کوشش کو ناکام بنادیا جائے۔ پولیس عہدیدار نے بتایا کہ قدیم شہر کے علاقہ عید گاہ میں حریت کانفرنس کی ریالی سے امن و قانون کا مسئلہ پیدا ہونے کا اندیشہ تھا جس کے باعث احتیاطی اقدام کے طور پر تحدیدات عائد کردی گئی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ شام تک کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا اور حالات مکمل پرامن ہیں۔ پولیس نے حریت کانفرنس کے صدر نشین میر واعظ عمر فاروق کو اپنے والد کی یاد میں ریالی نکالنے سے قبل ہی کل مکان پر نظر بند کردیا جنہیں 1990 ایک بندوق بردار نے ہلاک کردیا تھا۔ حکومت کے اقدام پر تنقید کرتے ہوئے حریت کے ترجمان نے کہا کہ کشمیری عوام میر واعظ محمد فاروق اور عبدالغنی لون کی یاد میں پرامن طریقہ سے ہفتہ شہادت منانا چاہتے ہیں لیکن میر واعظ عمر فاروق کو نظر بند کرکے کشمیریوں کے زخم پر نمک چھڑکنے کی کوشش کی گئی۔ واضح رہے کہ میر واعظ کو عسکریت پسندوں نے 21مئی 1990 کے دن گولی مار کر ہلاک کردیا تھااور آج ہی کے دن میر واعظ کی یاد میں نکالی گئی ریالی کے دوران 2002ء میں عبدالغنی لون کو انتہا پسندوں نے ماردیا تھا۔ حریت کانفرنس نے آج دونوں شہیدوں کی یاد میں کشمیر میں بند منانے کا اعلان کیا تھا۔ جس کے باعث عام زندگی متاثر رہی اور پولیس تحدیدات کے باعث کرفیو میں صورتحال دیکھی گئی۔

TOPPOPULARRECENT