Monday , June 25 2018
Home / ہندوستان / حزب المجاہدین کا عسکریت پسند ہلاک ، 5 فرار

حزب المجاہدین کا عسکریت پسند ہلاک ، 5 فرار

سرینگر ۔ 9 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) حزب المجاہدین کا ایک دہشت گرد ہلاک اور دیگر 5 سمجھا جاتا ہیکہ فرار ہوگئے جبکہ جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ میں ایک انکاؤنٹر ہوا۔ عسکریت پسند کی نعش جس کی شناخت فرحان احمد وانی کی حیثیت سے کی گئی ہے، تدفین کیلئے قڈوانی دیہات ضلع کھلگام کی سرحد پر شوپیان میں اس کے ارکان خاندان کے حوالہ کردی گئی۔ سڑک حادثہ میں جس میں ایک نیم فوجی گاڑی ملوث ہے، دیہات عوام ہلاکت پر پہلے ہی احتجاج کررہے ہیں۔ وانی کی موت کی خبر سے ہجوم مزید برہم ہوگیا اور اس نے قریبی فوجی کیمپ پر سنگباری کی۔ فوج نے ابتداء میں ہوائی فائرنگ کی جس کا مقصد نوجوانوں کے ہجوم کو منتشر کرنا تھا۔ دیگر نوجوانوں نے دعویٰ کیا کہ فوجیوں نے دوسری سمت سے فائرنگ کی۔ دو افراد گولی سے زخمی ہوگئے جن میں سے ایک ہاسپٹل میں انتقال کرگیا۔ متوفی کی شناخت 22 سالہ خالد ڈار کی حیثیت سے کی گئی۔ انکاؤنٹر کی تفصیلات بتاتے ہوئے سرکاری عہدیدار نے کہا کہ محکمہ سراغ رسانی سے اطلاع ملی تھی کہ حزب المجاہدین اور لشکرطیبہ کے دہشت گرد پہلی پورہ دیہات لارنو میں ضلع کوکرناگ میں جمع ہوگئے ہیں۔ انکاؤنٹر میں ایک عسکریت پسند ہلاک ہوگیا جبکہ دیگر پانچ سمجھا جاتا ہیکہ فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔ پولیس کے ترجمان نے توثیق کی کہ انکاؤنٹر میں مہلوک شخص حزب المجاہدین کا عسکریت پسند تھا۔ قبل ازیں پولیس اور فوج نے دو عسکریت پسندوں کی ہلاکت کا دعویٰ کیا تھا۔ ڈی جی پی ایس پی وید اور سرینگر میں مقیم فوج کے سنارکور کے فوجیوں نے اپنے ٹوئیٹر پر دو عسکریت پسندوں کی ہلاکت کی اطلاع دی تھی۔ پولیس کے ترجمان نے کہا کہ فوج اور سی آر پی ایف کے ساتھ اس علاقہ کا محاصرہ کرلیا گیا ہے اور پہلی پورہ دیہات میں تلاشی مہم جاری ہے۔ تلاشی کے دوران اس علاقہ میں روپوش عسکریت پسندوں نے تلاشی ٹیم پر فائرنگ کی۔ جوابی فائرنگ میں ایک دہشت گرد فرحان احمد وانی ساکن ریڈوانی قڈوانی دیہات ضلع کلگام میں ہلاک ہوگیا۔ ترجمان کے بموجب اس کے قبضہ سے 42 گولیاں دستیاب ہوئیں۔ ایک سخت گیر سنگباری کرنے والے کے خلاف ایف آئی آر درج کرلی گئی ہے۔ وہ بھی قبل ازیں کئی قوم دشمن کارروائیوں میں ملوث رہ چکا ہے۔
خفیہ اڈہ تباہ، 11 عسکریت پسند گرفتار
سرینگر سے موصولہ اطلاع کے بموجب تقریباً 11 افراد بشمول دو انتہاء پسندوں کو ضلع سوپور سے گرفتار کرلیا گیا ان میں سے دو مبینہ طور پر دہشت گرد تھے اور باقی 9 بے قصور نوجوان تھے جنہیں ممنوعہ دہشت گرد تنظیموں کیلئے بھرتی کیا جارہا تھا۔

TOPPOPULARRECENT