Friday , June 22 2018
Home / ہندوستان / حساس مقدمات کی ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ سماعت کو پولیس کی تائید

حساس مقدمات کی ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ سماعت کو پولیس کی تائید

اندو ر20 مئی (سیاست ڈاٹ کام ) مدھیہ پردیش کے ڈائرکٹر جنرل پولیس نندن دوبے نے نریندر مودی کے خلاف سیمی کے کارکنوں کی مبینہ اشتعال انگیز نعرہ بازی کے حالیہ واقعہ کے بعد حساس معاملات کی ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ سماعت کی بھرپور تائید کی ہے ۔ ڈی جی پی نے کہا کہ یہ واقعہ ذرائع ابلاغ کی وجہ حاصل کرنے کی کوشش تھا ۔ سیمی کے کارکن ذرائع ابلاغ کے

اندو ر20 مئی (سیاست ڈاٹ کام ) مدھیہ پردیش کے ڈائرکٹر جنرل پولیس نندن دوبے نے نریندر مودی کے خلاف سیمی کے کارکنوں کی مبینہ اشتعال انگیز نعرہ بازی کے حالیہ واقعہ کے بعد حساس معاملات کی ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ سماعت کی بھرپور تائید کی ہے ۔ ڈی جی پی نے کہا کہ یہ واقعہ ذرائع ابلاغ کی وجہ حاصل کرنے کی کوشش تھا ۔ سیمی کے کارکن ذرائع ابلاغ کے نظر رکھتے تھے اور نعرہ بازی کرتے تھے، اس کا مقصد ذرائع ابلاغ کی توجہ حاصل کرنا ہی تھا ۔ وہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے ۔ ڈی جی پی نے کہا کہ ایسے واقعات کے اعادہ کی روک تھام کیلئے عدالتوں میں ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ حساس مقدمات کی سماعت کا نظام قائم کیا جانا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ ممنوعہ تنظیم سیمی کے کارکنوں ابو فیصل اور دیگر کے خلاف اس سلسلہ میں مقدمے درج کئے گئے ہیں اور مناسب کارروائی کی جائے گی ۔ دوبے رستم جی مسلح پولیس تربیتی کالج کی پاسنگ آوٹ پریڈ میں شرکت کیلئے اندور آئے ہوئے تھے ۔ ہفتہ کے دن فیصل اور سیمی کے دیگر کارکنوں کو مودی کے خلاف اشتعال انگیز نعرہ بازی کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT