Sunday , April 22 2018
Home / اضلاع کی خبریں / حسن آباد آر ڈی او اور تحصیلدار کو نوٹس

حسن آباد آر ڈی او اور تحصیلدار کو نوٹس

اراضی سروے میں بے قاعدگیوں کے خلاف سابق سرپنچ جوڑے کی خودکشی کا شاخسانہ
حسن آباد۔/4 اپریل، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) حسن آباد ریونیو ڈیویژن میں مجوزہ جامع اراضی سروے کے دوران مبینہ طور پر بے قاعدگیوں و ریونیو ملازمین کی طرف اٹھنے والی انگلیوں کا جواب دینے کے لئے ضلع کلکٹر سدی پیٹ مسٹر وینکٹ رام ریڈی نے آر ڈی او حسن آباد مسٹر ایم شنکر کمار اور کھلے عام متعدد الزامات کا سامنا کرنے والے کوہیڈا منڈل تحصیلدار سرینواس کے خلاف نوٹس وجہ نمائی جاری کرتے ہوئے اندرون 72 گھنٹے مناسب جواب دینے کا سختی کے ساتھ حکم جاری کیا۔ تفصیلات کے بموجب کوہیڈا منڈل کے موضع کریلا میں مقامی تحصیلدار سرینواس و دیگر مقامی ریونیو ملازمین نے کھلے عام من مانی کرتے ہوئے رشوت خوری کے ذریعہ اراضی سروے میں بڑے پیمانے پر بے قاعدگیاں کی ہیں جس کے خلاف مقامی عوام و عوامی نمائندوں نے متعدد بار آر ڈی او و دیگر ریونیو حکام سے شکایت کی تھی تاہم اس ضمن میں کسی قسم کی کارروائی نہ ہونے پر 17مارچ کو موضع کریلا کے سابق سرپنچ کے بال ریڈی 55 سالہ نے اپنی بیوی وینکٹماں کے ساتھ آر ڈی او دفتر پہنچ کر آر ڈی او سے راست شکایت کی اور شدید برہمی کی حالت میں اپنے ساتھ ہی لائی گئی کیڑے مار دوا پی کر اقدام خودکشی کرلی جنہیں نازک حالت میں ورنگل دواخانے منتقل کیا گیا۔ بعد ازاں بہتر علاج کیلئے نمس دواخانہ حیدرآباد سے رجوع کیا گیا جہاں زائد از 15 دن تک زیر علاج رہ کر سابق سرپنچ کریلا بال ریڈی کی اہلیہ 50 سالہ وینکٹماں فوت ہوگئیں۔ جس کے تناظر میں کوہیڈا منڈل و حسن آباد ڈیویژن میں سخت کشیدگی پھیل گئی تھی نیز ریونیو حکام کے خلاف عوام میں شدید ناراضگی و برہمی دیکھی گئی۔ ابتدائی تحقیقات کے بعد ضلع انتظامیہ سدی پیٹ نے آر ڈی او حسن آباد شنکر کمار اور تحصیلدار سرینواس کو خاطی پاکر وجہ نمائی نوٹس ضلع کلکٹر کے ذریعہ جاری کروائی نیز جواب دہی کیلئے 72 گھنٹوں کا وقت دیا گیا۔ بھاری مقدار میں کیڑے مار دوا پینے والے مسٹر کے بال ریڈی سابق سرپنچ کریلا گزشتہ دو ہفتوں سے ہنوز تشویشناک حالت میں نمس دواخانہ میں زیر علاج ہیں۔

TOPPOPULARRECENT