Wednesday , December 13 2017
Home / شہر کی خبریں / حضرت سیّد سلطان محمود اللہ شاہ حُسینی ؒ

حضرت سیّد سلطان محمود اللہ شاہ حُسینی ؒ

از : اکرام اللہ شاہ

عالمی شہرت یافتہ سلسلہء صحویہ غوثیہ کمالیہ کے حیدرآباد میں سب سے پہلے بزرگ حضرت سیّدسلطان محمود اللہ شاہ حسینی رحمۃ اللہ علیہ ہیں ۔ نواحِ کرنول کے متوطن اور صاحب ِ فیضانِ خصوصی تھے۔ علمِ دین و ادب میں کافی مہارت تھی۔ آپ نے طلب ِ حق میں چودہ14 شیوخ سے فیضانِ صحبت حاصل فرمایا۔ آپ کے چودھویں شیخ حضرت سید خواجہ برہان الدین حقانی حق نما ؒ جو کہ حضرت سید شاہ کمال الدین ثانی ؒ المعروف شاہ کمال ؔ (صاحب ِ تصانیف ’’مخزن العرفان و کلماتِ کمالیہ ) کے داماد تھے اور حضرت سید  علاء الدین علیہ الرحمہ کے خلف و جانشین تھے۔ حضرت سید خواجہ برؔہان الدین حقانی حق نما علیہ الرحمہ نے آپ کو حیدرآباد جانے کا حکم دیا۔ اور فرمایا کہ ’’ وہاں جائو اور توحید پھیلائو‘‘ غرض حضرت سید سلطان  محمود اللہ شاہ حسینی رحمۃ اللہ علیہ حسب الحکُم حضرت شاہ برہان الدین رحمۃ اللہ علیہ ضلع بلہاری سے ہوتے ہوئے سکندرآباد تشریف لائے۔ حضرت سلطان محمود اللہ شاہ رحمۃ اللہ علیہ کے فیضانِ علم خصوصی سے سکندرآباد اور حیدرآباد کے اکثر اہلِ علم اور اہلِ طریق نے استفادہ فرمایا۔ سکندرآباد سے آپ نے حیدرآباد میں بھی قیام فرمایا۔ مستعدپورہ اور محلہ  فتح یاب خاں چنچل گوڑہ میں آپکا قیام رہا۔ بالٓاخر بعد فیض رسانی علوم لُدنیہ و معارف مورخہ 6ذی الحجہ 1311؁ء ہجری بمقامِ کولسہ واڑی چند ئے علیل رہ کر رحلت فرمائی۔ اور اپنی جانشینی حضرت کمال اللہ شاہ ؒ المعروف حضرت مچھلی والے شاہ ؒکو عطا فرمائی جو کہ آخر وقت تک آپ کی خدمت میں فیضیاب رہے۔ حضرت سلطان محمود اللہ شاہ حسینی المعروف شاہ جی رحمۃ اللہ علیہ کا مزار مبارک متصل نیاپل عقب دواخانہ عثمانیہ جو سابق میں وطن ؔ شاہ صاحب ؒ کا تکیہ مشہور تھا۔ واقع ہے ۔ آپ قادری ،چشتی ، نقشبندی، سہروردی، طبقاتی، وغیرہ کے مجمع السلاسل تھے۔ چنانچہ سلسلہء چشتیہ میں چند واسطوں سے حضرت محمد گیسودراز بندہ نواز ؒ سے جاملتا ہے آپ کے ایک پُوتر مرید نے آپکے مزار پر گنبد بناناچاہا تو آپنے بذریعہ خواب یہہ فرمایا کہ ’’ماٹی ملے کو مٹی ہی میں رہنے دو‘‘ چنانچہ آپ کے مزار پر صرف نیلا آسمان ہی گنبد نظر آتاہے۔ آپ کے خلیفہ ء حضرت سید احمد ؒ حضرت نور المصطفیٰ ؒ حضرت حکیم سید علی ؒ حضرت عبد الرزاق ؒ شاہ اور حضرت مچھلی والے شاہ صاحب ؒ آپ کے خلیفہ جانشین اور صاحب ِ حال و قال بزرگ تھے۔ حضرت سیّد سلطان محمود اللہ شاہ حسینی ؒ کا عرس مبارک ہر سال 29 ربیع الثانی کو منایا جاتا ہے حضرت غوثی شاہ صاحب ؒ اور حضرت صحوی شاہ صاحب ؒ کے بعد مولانا غوثوی شاہ ہر سال مراسمِ عرس انجام دیتے ہیں اور آپ ہی درگاہ کے موجودہ سجادہ نشین ہیں۔

TOPPOPULARRECENT