Monday , August 20 2018
Home / شہر کی خبریں / حکومت علیحدہ زرعی بجٹ کی تجویز سے دستبردار

حکومت علیحدہ زرعی بجٹ کی تجویز سے دستبردار

حیدرآباد ۔ 5مارچ( سیاست نیوز) حکومت زرعی شعبہ کیلئے علحدہ بجٹ کے فیصلہ سے دستبردار ہوگئی ہے ۔ چیف منسٹر کے سی آر نے سال 2018-19ء کے عام بجٹ میں زرعی شعبہ کیلئے علحدہ بجٹ پیش کرنے کا فیصلہ کرکے تیاری کرنے کی عہدیداروں کو ہدایت دی تھی اور ایک اجلاس طلب کرکے اس کا جائزہ بھی لیا تھا ۔ اجلاس میں وزرا ٹی ہریش راؤ ‘ پوچارم سرینواس ریڈی ‘ ایٹالہ راجندر ‘ مہیندر ریڈی ‘ ٹی ناگیشور راؤ کے علاوہ دونوں ایوانوں چیف وھپس پی سدھاکر ریڈی ‘ کے ایشور حکومت کے مشیر اعلی راجیو شرما ‘ معاشی مشیر جی آر ریڈی ‘ اسپیشل سکریٹریز ایس نرسنگ راؤ ‘ راما کرشنا راؤ ‘ پارتا سارتھی ‘ محکمہ زراعت کے کمشنر جگن موہن ‘ ہارٹیکلچر کمشنر وینکٹ رام ریڈی ‘ اسمبلی کے سکریٹری نرسمہا چاریلو کے علاوہ دوسرے عہدیداروں نے شرکت کی ۔ چیف منسٹر کے سی آر نے انہیں بتایا کہ تلنگانہ حکومت ابتداء سے زرعی شعبہ پر خصوصی توجہ دے رہی ہے ۔ اس سال زراعت کیلئے علحدہ بجٹ پیش کرنے کی تجویز تیار کی گئی ہے ۔ حکومت زرعی شعبہ کو فروغ دینے کئی نئی اسکیمات پیش کر رہی ہے ۔ غور و خوص کے بعد عہدیداروں نے چیف منسٹر کو بتایا کہ ریاستوں کیلئے دستور میں عام بجٹ پیش کی گنجائش ہے محکمہ جاتی علحدہ بجٹ کی گنجائش نہیں ہے ۔ اسمبلی رول نمبر 150 کے تحت بجٹ میں آمدنی اور خرچ کو پیش کرنے کی گنجائش سے دوسری حکمت عملی وغیرہ مد کے تحت پیش ہوتے ہیں ۔ متحدہ آندھراپردیش میں بھی زرعی شعبہ کیلئے علحدہ بجٹ کی کوشش کی گئی مگر دستور میں گنجائش نہ ہونے سے فیصلہ واپس لے لیا گیا تھا ۔ مرکز نے ریلوے بجٹ کو عام بجٹ میں ضم کردیا ہے جسکے بعد چیف منسٹر نے زرعی شعبہ کیلئے علحدہ بجٹ کی تجویز سے دستبرداری اختیار کرلی ۔

TOPPOPULARRECENT