Friday , November 24 2017
Home / شہر کی خبریں / حکومت ناکام ، عوامی منتخب نمائندے نا اہل ، عوام پریشان

حکومت ناکام ، عوامی منتخب نمائندے نا اہل ، عوام پریشان

ماہ رمضان المبارک کے موقع پر بہتر انتظامات کی ہدایات فضول ثابت
حیدرآباد۔7جون (سیاست نیوز) شہر حیدرآباد کے عوام کو بنیادی سہولتوں کی فراہمی میں حکومت ناکام ہو چکی ہے اور منتخبہ عوامی نمائندوں کی نمائندگیاں و احکام عہدیداروں کیلئے کوئی اہمیت کے حامل ثابت نہیں ہو رہے ہیں۔ شہر سے تعلق رکھنے والے ارکان اسمبلی کی جانب سے ماہ رمضان المبارک کی تیاریوں کے سلسلہ میں منعقدہ اجلاس کے دوران کی گئی ہنگامہ آرائی اور ان کی جانب سے عہدیداروں کو دی جانے والی ہدایات کا بھی اثر نہیں ہو رہا ہے جس کے سبب منتخبہ عوامی نمائندے خفت کا شکار ہیں لیکن ایسا لگ رہا ہے کہ وہ اب تک کی گئی ناکام نمائندگیوں کے بعد حکومت پر دباؤ ڈالنے سے بھی قاصر ہیں۔ حکومت کی جانب سے ماہ رمضان المبارک کے دوران بلا وقفہ برقی سربراہی کے اقدامات کا اعلان کیا گیا تھا لیکن ان پر عمل آوری میں ناکامی کے باوجود کوئی ذمہ دار جواب دینے کیلئے تیار نہیں ہے۔ محکمہ برقی کے اعلی عہدیدار برقی سربراہی منقطع ہونے کی صورت میں موبائیل پر بھی جواب دینے سے گریز کرنے لگے ہیں۔ تلنگانہ اسٹیٹ سدرن پاؤر ڈسٹربیوشن کارپوریشن نے شہر میں جاری تمام مینٹیننس کے کام کی عاجلانہ تکمیل کا اعلان کیا تھا اور درستگی کے کاموں کے نام پر کئی گھنٹوں تک برقی سربراہی منقطع کی جاتی رہی لیکن کیا درست کیا گیا یہ عوام تو نہیں لیکن نمائندے ضرور دریافت کر سکتے لیکن شائد عوام کو ہونے والی ان تکالیف سے انہیں کوئی دلچسپی نہیں ہے۔ شہر کے کئی علاقوں میں ماہ رمضان المبارک کے پہلے روزے کی سحر تاریکی میں کی گئی اب تک محکمہ برقی کی جانب سے یہ کہا جاتا تھا کہ رمضان کے دوران تاجرین کی جانب سے اضافی برقی کے استعمال کے سبب مسائل پیدا ہوتے ہیں لیکن اس مرتبہ ابتداء رمضان سے ہی برقی سربراہی میں خلل نے اقلیتوں کو مایوس کر دیا ہے ۔ سال گزشتہ ماہ رمضان المبارک کے دوران ٹی ایس ایس پی ڈی سی ایل کی جانب سے اعلان کیا گیا تھا کہ پرانے شہر کے علاقوں میں بلا وقفہ برقی سربراہی کو یقینی بنانے کیلئے ایک ڈائریکٹر کو رات بھر خدمات کی نگرانی کیلئے مامور کیا جائے گا لیکن نہ سال گزشتہ ایسا کیا گیا اور نہ ہی اس مرتبہ ایسا کئے جانے کی توقع ہے۔برقی سربراہی میں خلل کا یہ مسئلہ اب صرف پرانے شہر کا مسئلہ نہیں رہا بلکہ شہر کے ہر اس خطہ میں برقی سربراہی میں خلل کی شکایات موصول ہو رہی ہیں جو اقلیتی غالب آبادی والے علاقے ہیں۔ گزشتہ شب ٹولی چوکی ‘ مہدی پٹنم ‘ چنچل گوڑہ ‘ شاہ علی بنڈہ ‘ ہمت پورہ ‘ آصف نگر ‘ کاروان ‘ گولکنڈہ ‘ منڈی میر عالم ‘ پرانی حویلی ‘ یاقوت پورہ ‘ عنبر پیٹ کے علاقوں میں برقی سربراہی میں خلل کی متعدد شکایات موصول ہوئی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT