Friday , November 24 2017
Home / شہر کی خبریں / حکومت پر اپوزیشن کی حق کی آواز کو دبانے کا الزام

حکومت پر اپوزیشن کی حق کی آواز کو دبانے کا الزام

اسپیکر بھی جانبدار، تلگودیشم کا اسمبلی سے واک آؤٹ، ریونت ریڈی کا احتجاج
حیدرآباد 16 مارچ (سیاست نیوز) تلگودیشم کے فلور لیڈر مسٹر ریونت ریڈی نے تلنگانہ حکومت پر اپوزیشن کے حق کی آواز دبانے کا الزام عائد کیا۔ اسپیکر اسمبلی بھی جانبداری سے کام کررہے ہیں جس پر بطور احتجاج ہم نے آج اسمبلی کا بائیکاٹ کیا ہے۔ بعدازاں میڈیا پوائنٹ پر بات چیت کرتے ہوئے مسٹر ریونت ریڈی نے کہاکہ تلگودیشم پارٹی نے وقفہ سوالات میں دو اہم سوالات پیش کئے۔ کسانوں کی خودکشی سے متعلق سوال کو ریاستی وزیر زراعت کی عدم موجودگی کا بہانہ کرتے ہوئے ملتوی کردیا اور چاول کی بیرونی ممالک کو اسمگلنگ کرنے کے سوال پر تلگودیشم کے رکن اسمبلی مسٹر ایس وینکٹ ویریا کو سوال کرنے کا موقع فراہم کرنے کے بجائے اسپیکر اسمبلی نے ٹی آر ایس میں ضم ہونے والے تلگودیشم رکن اسمبلی کو موقع فراہم کرتے ہوئے تلگودیشم سے ناانصافی کی ہے۔ اسمبلی میں عددی طاقت کا حکمراں ٹی آر ایس ناجائز فائدہ اُٹھا رہی ہے۔ ارکان اسمبلی کے مفادات کا تحفظ کرنے کے بجائے اسپیکر اسمبلی بھی جانبداری کا مظاہرہ کررہے ہیں جس پر تلگودیشم نے اسمبلی کا بائیکاٹ کیا۔ تلگودیشم مقننہ پارٹی کی جانب سے اسپیکر اسمبلی کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے مباحث کے لئے وقت مقرر کرنے کی اپیل کی جائے گی۔ انھوں نے کہاکہ حکومت کے غلط فیصلوں اور بروقت کسانوں کی مدد نہ کرنے کی وجہ سے ابھی تک تلنگانہ میں 2000 کسان خودکشی کرچکے ہیں۔ اس پر مباحث کرنے اور کسانوں کو راحت فراہم کرنے کے معاملہ میں حکومت سنجیدہ نہیں ہے۔ راشن شاپس کے ذریعہ سربراہ کئے جانے والے چاول کی بیرونی ممالک میں بلیک مارکٹنگ ہورہی ہے۔ اس اسکام میں وزراء بھی ملوث ہیں۔ اس پر مباحث کے لئے بھی حکومت تیار نہیں ہے۔ ایسی اسمبلی میں بیٹھنے کا کیا فائدہ جہاں اپوزیشن کو اظہار خیال کی آزادی نہیں ہے۔ ارکان اسمبلی بالخصوص اپوزیشن جماعتوں کے حقوق اور احتیارات کو ختم کیا جارہا ہے۔ حکومت کا رویہ تکلیف دہ ہے اور اسپیکر اسمبلی بھی اپوزیشن کا ساتھ دینے کے بجائے حکومت کے دباؤ کا شکار ہورہے ہیں جس کی وجہ سے تلگودیشم پارٹی اسمبلی کا بائیکاٹ کرنے کے لئے مجبور ہورہی ہے۔ انھوں نے دوسری اپوزیشن جماعتوں پر بھی زور دیا کہ وہ ان کے ساتھ ہونے والی ناانصافیوں کے خلاف آواز اٹھائیں۔

TOPPOPULARRECENT