Saturday , May 26 2018
Home / اضلاع کی خبریں / حکومت کسانوں کی فلاح وبہبود کی پابند

حکومت کسانوں کی فلاح وبہبود کی پابند

سرسلہ میں رعیتو بندھوا اسکیم تقریب ‘ کے ٹی آر کا خطاب

گمبھی راؤ پیٹ ۔ 13 ؍ مئی (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) حکومت کسانوں کی فلاح و بہبود کی پابند ہے ۔ ریاست تلنگانہ کی حکومت کسانوں کی فلاح و بہبود کو اولین ترجیح دیتے ہوئے کسانوں کے قرضہ جات کو معاف کر رہی ہے۔ آج ملک کو آزاد ہوئے 70 سالوں کا عرصہ ہوچکا ہے ۔ ریاست میں کئی حکومتیں آتی رہیں اور جاتی رہیں لیکن کسانوں کے مفاد میں کسی نے کچھ نہیں کیا ۔ ریاست تلنگانہ کی تشکیل کے بعد ریاست کے وزیر اعلیٰ کے چندرشیکھرراؤ ریاست بھر میں 38 لاکھ افراد جن کا راست تعلق کسا ن گھرانے سے 17ہزار کروڑ روپئے قرضہ جات کو معاف کر دیا ہے ‘ جس کی مثال سابق بلکہ دیگر ریاستوں میں بھی نہیں ملتی ۔ ان خیالات کا اظہار ریاستی وزیر کے ٹی راماراؤ نے کیا ۔ وہ آج یہاں سرسلہ کے مختلف مقامات جن میں تنگڈہ پلی ‘ وغیرہ شامل ہیں ۔ رعیتو بندھ اسکیم کے پروگرام کو مخاطب کر رہے تھے ۔ انہوں نے اپنے خطاب میں اپوزیشن کی جانب سے جاری تنقیدوں کو مسترد کر دیا اور کہاکہ جو برسراقتدار کے دوران کسی کو کچھ نہیں کیا ۔ اب ان سے کس طرح کی امیدیں کی جاسکتی ہیں ۔ ریاستی وزیر کے ٹی راماراؤ نے وزیر اعلیٰ کے چندر شیکھرراؤ کی جانب سے ریاست میں انجام دیئے جانے والے ترقیاتی کاموں اور بالخصوص کاشتکاروں کے مفاد میں روبہ عمل لائے جانے الے اسکیمات کی سراہنا کی اور کہاکہ ریاست تلنگانہ ایک ہی ریاست ہے جہاں کے اسکیمات سے عوام کو ہونے والے فائدے سے دیگر ریاستوں متاثر ہیں ۔ ریاست تلنگانہ میں روبہ عمل اسکیمات جو کہ عوام کی فلاح کے لئے روبہ عمل لائی جا رہی ہیں اس کی ملک کے اندر کہیں بھی مثال نہیں ملتی ۔ اس پروگرام میں ریاست وزیر کے ٹی راماراؤ کے ہاتھوں کاشتکاروں میں چیکس اور پٹہ جات کے پاس بکس تقسیم کئے گئے ۔ اس موقع پر کلکٹر دیورکنڈہ کرشنا بھا سکرو دیگر موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT