Friday , September 21 2018
Home / Top Stories / حکومت کے اقدامات سے سرمایہ کاروں کو بہترین مواقع دستیاب

حکومت کے اقدامات سے سرمایہ کاروں کو بہترین مواقع دستیاب

نئی دہلی 14 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام)صدر جمہوریہ پرنب مکرجی نے آج کہا کہ نئی حکومت کے پالیسی اقدامات نے ہندوستان کو راست غیر ملکی سرمایہ کاری کیلئے ترجیحی منزل بنالیا ہے اور اندرون ملک و بیرون ملک سرمایہ کاروں کیلئے بہترین مواقع دستیاب ہیں۔ انہوں نے کہا کہ معیشت کی بحالی کیلئے نئی حکومت نے جاریہ مالی سال کی پہلی سہ ماہی میں کئی اقدامات

نئی دہلی 14 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام)صدر جمہوریہ پرنب مکرجی نے آج کہا کہ نئی حکومت کے پالیسی اقدامات نے ہندوستان کو راست غیر ملکی سرمایہ کاری کیلئے ترجیحی منزل بنالیا ہے اور اندرون ملک و بیرون ملک سرمایہ کاروں کیلئے بہترین مواقع دستیاب ہیں۔ انہوں نے کہا کہ معیشت کی بحالی کیلئے نئی حکومت نے جاریہ مالی سال کی پہلی سہ ماہی میں کئی اقدامات کئے ہیں جس کے نتیجہ میں ہماری جی ڈی پی کا فروغ 5.7 فیصد ہوگیا ہے۔ غیر ملکی سرمایہ کار پہلے ہی سرمایہ کاری کیلئے ہندوستان کو ترجیح دے رہے ہیں۔ وہ انڈیا انٹرنیشنل ٹریڈ فیر میں افتتاحی خطبہ دے رہے ہیں۔ امکان ہے کہ 20 لاکھ افراد 34 ویں انڈیا انٹرنیشنل ٹریڈ فیر میںشرکت کریں گے جس کا افتتاح صدر جمہوریہ نے کیا ہے۔میلے میں 6500 سے زیادہ کمپنیاں اور 25 غیر ملکی کمپنیاں شرکت کررہی ہے ۔ 25بیرونی ممالک کو اس میلے میں شرکت کی ترغیب حاصل ہوئی ہے ۔ وسیع پیمانے پر اشیائے تجارت و خدمات پیش کرنے کے علاوہ میلہ نئی پالیسی میک ان انڈیا کے ذریعہ ہندوستان کی عالمی کشش برائے سرمایہ کاری میں مزید اضافہ ہوگیا ہے ۔کئی شعبوں میں سرمایہ کاری کے مواقع پیدا ہوگئے ہیں۔ یہ میلہ سماجی مسائل بشمول وزیراعظم کی صفائی کی مہم پر خصوصی توجہ دے رہا ہے جو انہوں نے سوچھ بھارت کے نام سے شروع کی ہے ۔ 14 تا 18 نومبر صرف کاروباری تماشائیوں کیلئے مختص رہیں گے ۔ عوام کیلئے یہ میلہ 19 تا 27 ستمبر کھلا رہے گا ۔ عمررسیدہ افراد اور معذور افراد کیلئے داخلہ مفت ہوگا ۔ میلے کے اوقات 9.30 بجے دن تا 7.30 بجے شام ہیں ۔ ٹکٹس پیشگی فروخت نہیںکئے جائیں گے ۔ منتظمین نے کہا کہ داخلہ روزانہ 5 بجے شام بند کردیا جائے گا ۔ اس میلہ کا مرکزی موضوع جاریہ سال ’’خاتون صنعتکار ‘‘ ہیں جس کا مقصدخواتین کے فلاح و بہبود کے پروگراموں کو ملک کے مختلف علاقوں سے یکجہت کرنا ہے ۔ جنوبی افریقہ آئی آئی ٹی ایف کا پہلے ہی سے شراکت دار ملک ہے۔تھائی لینڈ پر توجہ مرکوز ہے اور حکومت ہند ریاستوں پر بھی توجہ مرکوز کررہی ہے ۔ 25 بیرونی ممالک جاریہ سال کے تجارتی میلہ میں شرکت کررہے ہیں۔ جن میں جرمنی ،پاکستان ،افغانستان ،بنگلہ دیش ،بحرین ،کیوبا مصر ،ہانک کانگ ،ایران ،انڈونیشیاء ، جاپان جنوبی کوریا ،کویت ،کرغیزستان، ملیشیاء ،مائنمار ، نیپال سری لنکا، جنوبی افریقہ ،تھائی لینڈ ،تبت ،ترکی متحدہ عرب امارات اور ویتنام شامل ہیں۔ صدر جمہوریہ نے اپنی تقریر میں کہا کہ انہیں اعتماد ہے کہ یہ نمائش نظریات ،نقاط نظر کے باہم تبادلے ،سودوں اور تاجروں ،صنعتکاروں ،امکانی سرمایہ کاروں کے درمیان طویل مدتی روابط قائم کرے گی ۔ صدر جمہوریہ نے آئی آئی ٹی ایف کو ہندوستان کی مہارت کی طاقت کے مظاہرے کی ایک تقریب قرار دیا۔ اور کہا کہ خاص طور پر جب کہ ہندوستان عالمی پیداواری مرکز بننے کی کوشش کررہا ہے ۔ یہ تقریب اس کیلئے ایک اہم موقع ہے۔

TOPPOPULARRECENT