Wednesday , May 23 2018
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد اور سکندرآباد کے سنیما گھر غیر معینہ مدت کے لیے بند

حیدرآباد اور سکندرآباد کے سنیما گھر غیر معینہ مدت کے لیے بند

فلم ریلیز کی کمپنیوں سے فیس میں اضافہ کے خلاف مالکین تھیٹرس کا احتجاج
حیدرآباد۔2مارچ (سیاست نیوز) فلم انڈسٹری بالخصوص تھیٹر مالکین کو ہونے والی مالی مشکلات کے خلاف جنوبی ہند کی ریاستوں میں موجود تھیٹر مالکین نے 2مارچ سے غیر معینہ مدت کے بند کا اعلان کیا ہے اور اس بند کی آج شروعات ہو چکی ہے ۔ دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد کی تمام تھیٹرس آج مکمل بند رہیں ۔ بتایاجاتاہے کہ جنوبی ہند و شمالی ہند میں سیٹلائیٹ کے ذریعہ فلم کی ریلیز کو یقینی بنانے والی کمپنیوں کی جانب سے علحدہ فیس وصول کئے جانے کے علاوہ ان کمپنیوں کی اجارہ داری کے خلاف شروع کئے گئے اس بند کے سلسلہ میں تھیٹر مالکین کا کہناہے کہ شمالی ہند کے تھیٹرس میں ریلیز کی جانے والی فلم کیلئے ان کمپنیو ںکی جانب سے جو فیس وصول کی جاتی ہے اس سے کافی زیادہ فیس جنوبی ہند کے تھیٹرس میں وصول کی جاتی ہے جو کہ جنوبی ہند کے تھیٹر مالکین پر ظلم کے مترادف ہے۔ دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد کے تھیٹرس آج مکمل بند ہونے کے باعث شائقین فلم کو مایوسی کا سامنا کرنا پڑا اور کئی مقامات پر اختیاری تعطیل کے سبب فلم بینی کے لئے پہنچنے والوں کو پہنچنے کے بعد اس بات کا پتہ چلا کہ تھیٹرس نے غیر معینہ مدت کی ہڑتال کا آغاز کردیا ہے ۔ جناب محمد سراج احمد (اگزیبیٹر) نے بتایا کہ سیٹلائیٹ کمپنیوں کی اجارہ داری اور ملک میں شمال اور جنوب میں علحدہ علحدہ فیس وصول کئے جانے کے خلاف شروع کئے جانے والے اس بند کو جنوبی ہند کی تمام ریاستوں کے فلم چیمبر آف کامرس کی تائید حاصل ہے۔ ڈیجیٹل سروس فراہم کرنے والی کمپنیوں کی جانب سے کی جانے والی من مانی پر کسی قسم کی روک نہ ہونے کے سبب بھی ڈیجیٹل خدمات فراہم کرنے والوں کی جانب سے زیادہ قیمت وصول کی جا رہی ہے جو کہ تھیٹر مالکین کے لئے نقصان کا باعث ہے۔ بتایاجاتاہے کہ گذشتہ کئی ماہ سے اس مسئلہ کے حل کیلئے مذاکرات کا سلسلہ جاری تھا لیکن اب ڈیجیٹل خدمات فراہم کرنے والی کمپنیوں نے جو دوسری کمپنیاں اس شعبہ میں قدم رکھتے ہوئے مسابقت میں اضافہ کر رہی تھیں ان کمپنیو ںکو بھی بند کروادیا ہے یا خرید لیا ہے اور جو صورتحال پیدا کی ہے اس کے اعتبار سے اب ڈیجیٹل خدمات کی فراہمی کرنے والی صرف دو کمپنیاں باقی رہ گئی ہیں اور ان کمپنیوں کے ذریعہ ہی یہ خدمات حاصل کرنی پڑتی ہیں لیکن ان کمپنیوں نے اب اجارہ داری اورمن مانی فیس کی وصولی کا عمل شروع کیا ہے جو کہ ناقابل قبول ہے اسی لئے کیرالا‘ کرناٹک‘ تمل ناڈو ‘ آندھرا پردیش کے علاوہ ریاست تلنگانہ کے تمام تھیٹر مالکین نے غیر معینہ مدت کیلئے بند کا آغاز کیا ہے اور ہڑتا ل کے پہلے دن تھیٹر بند مکمل اور کامیاب رہا۔

TOPPOPULARRECENT