Tuesday , November 21 2017
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد شہر اردو زبان کا علمبردار، فروغ اردو کیلئے دانشوروں کی خدمات کو خراج تحسین

حیدرآباد شہر اردو زبان کا علمبردار، فروغ اردو کیلئے دانشوروں کی خدمات کو خراج تحسین

ڈاکٹر سید فاضل حسین پرویز کی تصنیف کل آج لوکل کا رسم اجراء، سید وقارالدین، محمد محمود علی، ڈاکٹر اسلم پرویز و دیگر کا خطاب
حیدرآباد۔5ڈسمبر(سیاست نیوز) ڈاکٹر فاضل حسین پرویز کی تصنیف اُردو میڈیا کل آج او رکل کے دوسرے ایڈیشن کی نائب وزیر اعلی تلنگانہ ریاست الحاج محمد محمو د علی او روائس چانسلر مولانا آزاد اُردو یونیورسٹی ڈاکٹر محمداسلم پرویز کے ہاتھوں رسم رونمائی انجام پائی۔ سالار جنگ میوزیم میںمنعقدہ اس تقریب کی نگرانی ایڈیٹر رہنمائے دکن جناب سید وقار الدین نے کی جبکہ پروفیسر فاطمہ پروین ‘ پروفیسر ایس اے شکور سکریٹری ڈائرکٹر اُردو اکیڈیمی تلنگانہ ‘جناب ظفر جاوید کے علاوہ شہر حیدرآباد کی ادبی ‘ ملی تنظیموں سے وابستہ سرکردہ شخصیتوں نے شرکت کی۔اپنے صدارتی خطاب میں جناب سیدوقار الدین نے اُردو میڈیا کل آج اور کل کی ستائش کرتے ہوئے کہاکہ موجودہ دو ر میں صحافت سے جڑے افراد کے لئے یہ کتاب معاون ثابت ہوگی۔ تقریب کی کارروائی جناب شجاعت علی راشد نے چلائی۔ جناب سید وقار الدین نے مزیدکہاکہ دور ہذا میں اُردو زبان کے ساتھ کھلواڑ کیاجارہا ہے مگر ہندوستان کی مختلف ریاستوں میںعلاقائی جماعتوں کے اقتدار میںآنے سے اُردو زبان کچھ حد تک محفوظ ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ریاست حیدرآباد کے انڈین یونین میںشامل ہونے سے قبل اُردو کاریاست حیدرآباد کی سرکاری زبان میںشمار کیاجاتا تھا مگر زوال ریاست حیدرآباد کے ساتھ اُردو زبان کو ختم کرنے کی سازشیں بھی عروج پر پہنچ گئیں۔انہوں نے اُردو صحافت کے متعلق مزیدکتابوں کی اشاعت کو بھی ضروری قراردیا اور ڈاکٹر سید فاضل حسین پرویز کو ان کی نئی تصنیف پرمبارکباد بھی پیش کی۔ ڈپٹی چیف منسٹر تلنگانہ الحاج محمد محمودعلی نے کہاکہ پورے ہندوستان میںریاست تلنگانہ ایک واحد ریاست ہے جس کے تمام دس اضلاع میںاُردو زبان کو دوسرا درجہ فراہم کیاگیاہے۔ انہوں نے مستقبل میںاُردو زبان کے فروغ کے لئے مزیداقدامات کرنے کا بھی اعلان کیا اور کہاکہ سابق کی آندھرائی حکومتوں نے تلنگانہ سے اُردو کوختم کرنے کی سازشیں کیں۔ جناب محمد محمود علی نے بھی فاضل حسین پرویز کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے مستقبل میںاُردو صحافت کے لئے مزید تخلیقات کی امید ظاہر کی ۔وائس چانسلر مولانا آزاد نیشنل اُردو یونیورسٹی ڈاکٹر محمد اسلم پرویز نے حیدرآباد کو اُردو زبان کا علمبردار شہر قراردیتے ہوئے کہاکہ اُردو کے فروغ اور بقاء کے لئے شہر حیدرآباد کے دانشواروں کی خدمات ناقابلِ فراموش ہیں۔ انہوں نے مولانا آزاد اُردو یونیورسٹی میںاُردو کے فروغ کے متعلق نئے کورسس متعارف کروانے کا بھی اعلان کیاتاکہ اُردو داںطبقے کے مستقبل کو بہتر بنایا جاسکے۔ اس موقع پر ڈاکٹر فاضل حسین پرویز کو نائب وزیراعلی تلنگانہ ریاست الحاج محمد محمودعلی کے ہاتھوں تہنیت بھی پیش کی گئی۔

TOPPOPULARRECENT