Tuesday , June 19 2018
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد میں اسمارٹ سٹی کے قیام پر تبادلہ خیال

حیدرآباد میں اسمارٹ سٹی کے قیام پر تبادلہ خیال

حیدرآباد 14 ڈسمبر ( این ایس ایس ) ریاست تلنگانہ کے وزیر انفارمیشن ٹکنالوجی و پنچایت راج مسٹر کے تارک راما راؤ نے دوبئی اسمارٹ سٹی کا دورہ کیا ۔ انہوں نے اسپیشل سکریٹریز انڈسٹریز کے پردیپ چندرا ایم ڈی ٹی ایس آئی آئی سی اور کمشنر انڈسٹریز جئیش رنجن اور فیڈریشن آف انڈین چیمبرس آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے ایک وفد کے ساتھ یہ دورہ کیا اور اسما

حیدرآباد 14 ڈسمبر ( این ایس ایس ) ریاست تلنگانہ کے وزیر انفارمیشن ٹکنالوجی و پنچایت راج مسٹر کے تارک راما راؤ نے دوبئی اسمارٹ سٹی کا دورہ کیا ۔ انہوں نے اسپیشل سکریٹریز انڈسٹریز کے پردیپ چندرا ایم ڈی ٹی ایس آئی آئی سی اور کمشنر انڈسٹریز جئیش رنجن اور فیڈریشن آف انڈین چیمبرس آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے ایک وفد کے ساتھ یہ دورہ کیا اور اسمارٹ سٹی کے چیف ایگزیکیٹیو آفیسر عبدالطیف الملا اور اس کے مینیجنگ ڈائرکٹر ڈاکٹر باجو جارج سے ملاقات کی اور تبادلہ خیال کیا ۔ بات چیت کے دوران حیدرآباد میں ایک اسمارٹ شہر کو یقینی بنانے کے امکان کا جائزہ لیا گیا ۔ واضخ رہے کہ انفارمیشن ٹکنالوی انوسٹمنٹ ریجن کے ایک حصہ کے طور پر حیدرآباد میں اسمارٹ شہر کے قیام کی تجویز ہے ۔ اس پر آج کے اجلاس میں غور و خوض کیا گیا ۔ عبدالطیف الملا نے اس پیشکش پر مسرت کا اظہار کیا اور آئندہ ایک ہفتے کے دوران مزید تبادلہ خیال کیلئے انہوں نے حیدرآباد کا دورہ کرنے سے اتفاق کیا ۔ دوبئی میں اسمارٹ سٹی ایک ہمہ جہتی ترقیاتی نمونہ ہے جہاں آئی ٹی کمنیوں کے علاوہ رہائشی اور تجارتی ترقی کو یقینی بنایا جاتا ہے اور یہاں ئی سہولیات ہیں جس کے نتیجہ میں وہاں رہنے بسنے والے اور کام کرنے والے افراد کو معیاری زندگی حاصل ہوتی ہے اور وہ اپنے مسائل کے حل کیلئے ٹکنالوجی پر زیادہ انحصار کرتے ہیں۔ اسمارٹ سٹی دوبئی در اصل یوروپ میں مالٹا کی نقل ہے ۔ ہندوستان میں کیرالا کی ریاستی حکومت نے اسمارٹ سٹی دوبئی کے ساتھ ایک شراکت شروع کی ہے تاکہ ایسا ہی ایک نمونہ کوچی میں 250 ایکر اراضی پر قائم کیا جاسکے ۔ اسمارٹ سٹی دوبئی کی جانب سے آٹھ سال کے دوران کوچی میں 4,000 کروڑ روپئے کی سرمایہ کاری کا منصوبہ ہے ۔

TOPPOPULARRECENT