Thursday , January 18 2018
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد میں اسکائی واک برجس کی تعمیر کا منصوبہ،مختلف محکمہ جات کے مابین عدم تعاون

حیدرآباد میں اسکائی واک برجس کی تعمیر کا منصوبہ،مختلف محکمہ جات کے مابین عدم تعاون

حیدرآباد ۔ 4 ۔ فروری : ( سیاست نیوز ) : ممبئی کی طرح شہر حیدرآباد کے بیشتر علاقوں میں آئندہ برس کے آغاز کے بعد اسکائی واک برجس کے آغاز کا منصوبہ ہے اور حیدرآباد میٹرو ریل کے علاوہ حیدرآباد میٹرو پولیٹن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی اس منصوبہ کو عملی جامہ پہنانے کے متعلق سنجیدگی سے غور و خوص میں مصروف ہے ۔ کیا واقعی حیدرآباد میں پیدل راہروؤں کو سڑک

حیدرآباد ۔ 4 ۔ فروری : ( سیاست نیوز ) : ممبئی کی طرح شہر حیدرآباد کے بیشتر علاقوں میں آئندہ برس کے آغاز کے بعد اسکائی واک برجس کے آغاز کا منصوبہ ہے اور حیدرآباد میٹرو ریل کے علاوہ حیدرآباد میٹرو پولیٹن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی اس منصوبہ کو عملی جامہ پہنانے کے متعلق سنجیدگی سے غور و خوص میں مصروف ہے ۔ کیا واقعی حیدرآباد میں پیدل راہروؤں کو سڑک عبور کرنے کے علاوہ بغیر کسی رکاوٹ کے ایک مقام سے دوسرے مقام تک پہنچانے والے اسکائی واک تعمیر ہوپائیں گے ؟ ایسا محسوس ہوتا ہے کہ سیاستدانوں کی طرح اب خود عہدیدار بھی عوام کو خوابوں کی دنیا میں رکھتے ہوئے ان کی امیدوں میں اضافہ کرنا چاہتے ہیں اور انہیں خوش فہمی میں مبتلا رکھتے ہوئے اپنے مقصد کو حاصل کرنے میں دلچسپی دکھا رہے ہیں چونکہ اسکائی واک کی تعمیر و تنصیب کا عمل صرف حیدرآباد میٹرو ریل یا پھر حیدرآباد میٹرو پولیٹن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے منصوبہ تیار کرلینے سے نہیں ہوتا چونکہ اس عمل میں مختلف محکمہ جات بشمول محکمہ برقی کا اہم رول ہوگا چونکہ حیدرآباد میں زیر زمین برقی نظام نہیں ہے بلکہ شہر میں سڑک پر موجود کھمبوں اور برقی تاروں کے ذریعہ برقی سربراہی یقینی بنائی جاتی ہے ۔ اور اگر اسکائی واک کی تعمیر کا منصوبہ تیار کیا جاچکا ہے تو کوئی یہ کیوں نہیں بتارہا ہے کہ برقی سربراہی نظام کو زیر زمین کرنے کے کیا اقدامات کئے جارہے

ہیں اگر یہ اقدامات نہیں کئے جارہے ہیں تو پھر کن بنیادوں پر محفوظ اسکائی واک کی تعمیر کا منصوبہ تیار کیا جاچکا ہے ۔ شہر کے مختلف علاقوں بالخصوص گہما گہمی و بھیڑ بھاڑ والے علاقوں میں عوام کی سہولت کے لیے اس منصوبہ کا تیار کیا جانا درست ہے لیکن یہ منصوبہ کس اعتبار سے قابل عمل ہے اس کا جواب کسی کے پاس نہیں ہے ۔ چونکہ حیدرآباد میٹرو ریل کی جانب سے معلنہ یہ منصوبہ کوئی نیا نہیں ہے اور شائد عہدیداروں کا یہ ماننا ہے کہ انتخابات میں سیاسی جماعتوں کے امیدواروں کی طرح ان کے اعلانات و وعدوں کو بھی عوام فراموش کردیں گے ۔ لیکن ایسا نہیں ہے چونکہ عوام جان چکے ہیں کہ انہیں گمراہ کس طرح کیا جارہا ہے ۔ چارمینار پیدل راہرو پراجکٹ ، خزانہ عامرہ پارکنگ لاٹ پراجکٹ ، تاریخی چارمینار کے اطراف و اکناف زیر زمین برقی کیبل کی تنصیب کا اعلان پتھر گٹی کو خوبصورت بناتے ہوئے ایک ہی طرز کے سائن بورڈ نصب کرنے کا منصوبہ و پراجکٹ یہ تمام پراجکٹ صرف پراجکٹ کی حد تک محدود رہے کہیں ایسا نہ ہو کہ اسکائی واک کی تعمیر کے پراجکٹس بھی فٹ اوور برج کی حد تک ہی محدود ہو کر نہ رہ جائیں ۔ اسی لیے حیدرآباد میٹرو ریل اور حیدرآباد میٹرو پولیٹن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کو اس خصوص میں عملی اقدامات سے قبل اس کے منفی و مثبت اثرات پر غور کریں چونکہ پراجکٹ ادھورے چھوڑ دئیے جانے کے سبب محکمہ جات اور حکومت کی بدنامی ہورہی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT