Monday , June 25 2018
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد میں سعودی قونصل خانہ کے قیام کے لیے تعاون کی خواہش

حیدرآباد میں سعودی قونصل خانہ کے قیام کے لیے تعاون کی خواہش

ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کو صدر بزم عثمانیہ جدہ عارف قریشی کا مکتوب

ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کو صدر بزم عثمانیہ جدہ عارف قریشی کا مکتوب
حیدرآباد ۔ 5 ۔ اگست : ( پریس نوٹ ) : بزم عثمانیہ جدہ سعودی عربیہ کے صدر جناب عارف قریشی نے ڈپٹی چیف منسٹر تلنگانہ جناب محمد محمود علی کو ایک مکتوب روانہ کرتے ہوئے بزم عثمانیہ کی جانب سے انہیں اور تلنگانہ راشٹرا سمیتی کو مبارکباد دی کہ اس کی جدوجہد ، کاوشوں اور پر زور تحریک کی وجہ تلنگانہ ایک حقیقت بنا ہے ۔ عارف قریشی نے اپنے مکتوب میں بزم عثمانیہ کی سرگرمیوں کا تفصیل سے ذکر کرتے ہوئے ڈپٹی چیف منسٹر کو گلف این آر آئز کو درپیش مسائل سے واقف کروایا ۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عربیہ میں 5 لاکھ سے زیادہ حیدرآبادی کام کررہے ہیں ۔ اس لیے حیدرآباد میں سعودی عربیہ کے قونصلیٹ کا قیام ضروری ہے تاکہ حیدرآبادیوں کو سہولت اور آسانی ہو ۔ اس سلسلہ میں انہوں نے ڈپٹی چیف منسٹر سے تعاون کی خواہش کی ۔ عثمانیہ یونیورسٹی کی جانب سے قونصلیٹ جنرل ہند ، جدہ کے اشتراک سے سعودی عربیہ میں کرسپانڈنس کورسیس شروع کئے جائیں ۔ پروفیشنل کورسیس میں این آر آئی طلبہ کے لیے خصوصی کوٹہ مقرر کیا جائے ۔ جیسے انجینئرنگ ، میڈیسن اور اسکولس میں ہوتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ سے تعلق رکھنے والے این آر آئز کے لیے تلنگانہ میں ایک علحدہ گلف این آر آئی ماڈل کالونی تعمیر کی جائے ۔ 60 سال سے زائد عمر کے گلف این آر آئز کو جو وطن واپس ہورہے ہیں پنشن دیا جائے ۔ ان لوگوں نے کافی بیرونی زر مبادلہ ہماری ریاست کو بھیجا ہے اور اس کی ترقی میں اپنا حصہ ادا کیا اور انہیں علاج معالجہ کے لیے کم از کم پچاس فیصد ڈسکاونٹ کی سہولت فراہم کی جائے ۔ گلف این آر آئز کو ووٹ دینے کا حق دیا جائے ۔ عارف قریشی نے اس امید کا اظہار کیا کہ ڈپٹی چیف منسٹر ان کی تجاویز پر ہمدردانہ غور کریں گے ۔۔

TOPPOPULARRECENT