Thursday , April 19 2018
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد میں میٹرو ریل کے علاوہ اسکائی ویز کی تجویز

حیدرآباد میں میٹرو ریل کے علاوہ اسکائی ویز کی تجویز

ورنگل کیلئے 300 کروڑ ، اسمبلی میں وزیر فینانس کا اعلان
حیدرآباد ۔ 15 ۔مارچ (سیاست نیوز) حکومت نے حیدرآباد میں بنیادی انفراسٹرکچر سہولتوں کو بہتر بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔ آئندہ 20 تا 40 برسوں کی ضرورتوں کو پیش نظر رکھتے ہوئے ٹریفک اور دیگر مسائل کا مستقل حل تلاش کیا جارہا ہے ۔ وزیر فینانس ای راجندر نے بجٹ تقریر میں بتایا کہ حکومت حیدرآباد کی ترقی پر خصوصی توجہ دے رہی ہے۔ چیف منسٹر نے روڈ نیٹ ورک کو بہتر بنانے کیلئے حیدرآباد کے چاروں طرف ایکسپریس ویز کی تعمیر کے علاوہ ہائی ویز اور اسکائی ویز کی منظوری دی ہے۔ میٹرو ریل پراجکٹ کا حال ہی میں وزیراعظم نریندر مودی نے افتتاح کیا ۔ ناگول تا میاں پور پہلے مرحلہ کا کام مکمل ہوچکا ہے ۔ آئندہ چند ماہ میں دیگر روٹس کا کام بھی مکمل ہوجائے گا ۔ حیدرآباد کے بعد ورنگل ریاست کا بڑا شہر ہے ، حکومت انفراسٹرکچر سہولتوں کو بہتر بنانے کیلئے ہر سال 300 کروڑ روپئے فراہم کر رہی ہے۔ بجٹ 2018-19 ء میں ورنگل کی ترقی کیلئے 300 کروڑ کی تجویز ہے ۔ تلنگانہ کے دیگر کارپوریشنوں میں ترقیاتی کاموں کیلئے فی کس 400 کروڑ مختص کئے جائیں گے۔ شہری علاقوں کی ترقی کیلئے محکمہ بلدی نظم و نسق اور شہری ترقیات کو 7251 کروڑ مختص کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔ امن و ضبط کی صورتحال کا ذکر کرتے ہوئے وزیر فینانس نے کہا کہ کئی دہوں تک تلنگانہ سماج میں امن و ضبط کے مسائل درپیش رہے ۔ تلنگانہ ریاست کے قیام کے بعد پہلی مرتبہ امن اور استحکام کا دور دورہ ہے ۔ حکومت نے امن و ضبط کی برقراری کے ساتھ ساتھ جرائم پر قابو پانے کے اقدامات کئے ہیں ۔ حکومت نے پولیس ڈپارٹمنٹ کو مکمل طور پر عصری بنانے اور مستحکم کرنے کیلئے درکار اسٹاف ، گاڑیوں اور عصری آلات فراہم کئے ہیں۔ پولیس میں کئی اصلاحات پر عمل کیا گیا۔ پولیس کی خدمات کو عوام سے قریب کرنے کیلئے 7 پولیس کمشنریٹ 27 پولیس سب ڈیویژن ، 29 سرکلس اور 103 پولیس اسٹیشن قائم کئے گئے۔ ہوم گارڈس کو تلنگانہ کی تشکیل کے وقت ماہانہ 9000 روپئے ادا کئے جارہے تھے ۔ تلنگانہ حکومت نے اس رقم کو بڑھاکر 20,000 روپئے ماہانہ کردیا ہے۔ ٹریفک پولیس کی خدمات کے اعتراف میں حکومت نے 30 فیصد خصوصی الاؤنس کو منظوری دی جو ان کی بنیادی یافت پہ دی جائے گی ۔ حکومت نے پولیس میں تقررات کیلئے عمر کی حد میں رعایت دی ہے۔ محکمہ داخلہ کیلئے بجٹ میں 5790 کروڑ کی گنجائش رکھی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT