Wednesday , December 13 2017
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد و سکندرآباد کی مساجد میں معتکفین کے استقبال کی تیاریاں

حیدرآباد و سکندرآباد کی مساجد میں معتکفین کے استقبال کی تیاریاں

اجتماعی اعتکاف میں نوجوانوں کی تربیت ، مساجد میں خصوصی انتظامات
حیدرآباد۔20جون(سیاست نیوز) دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد کی اہم مساجد میں معتکفین کے استقبال کی تیاریوں کا آغاز ہو چکا ہے۔ ماہ رمضان المبارک کے آخری عشرہ میں کیا جانے والا اعتکاف سنّت مؤکدہ کفایہ ہے ۔ اس میں بستی سے کم از کم ایک فرد اعتکاف بیٹھ جائے تو کافی ہے اور اگر کوئی اعتکاف نہ کرے تو سب گناہگار ہوں گے۔ ماہ رمضان المبارک کے دوران عبادتوں کے خشوع و خضوع میں اضافہ کے ساتھ اللہ کی رحمتیں نازل ہوتی ہیں اور ہر شخص زیادہ سے زیادہ عبادتوں میں رہنے کی کوشش کرتا ہے۔ گزشتہ چند برسوں کے دوران دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد کے علاوہ ملک کے دیگر مقامات پر بھی ماہ رمضان المبارک کے آخری عشرہ میں کئے جانے والے اعتکاف کی جانب رغبت میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے ۔ شہر کی کئی مساجد میں اجتماعی اعتکاف کیا جار ہا ہے اور اس اجتماعی اعتکاف کے دوران نوجوانوں کی تربیت پر توجہ مرکوز کی جانے لگی ہے۔ رمضان المبارک کے آخری عشرہ کے دوران اعتکاف میں بیٹھنے والے معتکفین کی سہولتوں کا خصوصی خیال رکھنے اور انہیں ضروری سہولتوں کی فراہمی کے متعلق غور کیا جا رہا ہے۔ نوجوان نسل میں دینی شعور بیدار کرنے والوں کی جانب سے کی جانے والی یہ کوششیں بڑی حد تک کامیاب ہو رہی ہیں اور معتکفین کی بڑی تعداد نوجوانوں کی ہوتی جا رہی ہے۔ شہر حیدرآباد میں ماہ رمضان المبارک کے دوران معتکفین کیلئے مسجدعزیزیہ ہمایوں نگر‘ جامع مسجد معظم پورہ ملے پلی ‘ مسجد ٹین پوش لال ٹیکری ‘ مسجد اکبری اکبر باغ ‘ شاہی مسجد باغ عامہ ‘ جامع مسجد چوک ‘ تاریخی مکہ مسجد ‘جامع مسجد کمان ایلچی بیگ ‘ جامع مسجد بارکس کے علاوہ دیگر مساجد میں خصوصی انتظامات کئے جاتے ہیں تاکہ انہیں دوران اعتکاف کسی مشکل یا تکلیف کا سامنا کرنا نہ پڑے۔شہر کی مختلف تنظیموں و جماعتوں کی جانب سے اجتماعی اعتکاف کا اہتمام بھی کیا جا رہا ہے جہاں معتکفین کی تربیت و اصلاح کے خصوصی اجلاس رکھے جا رہے ہیں۔ بنجارہ ہلز میں واقع ایک مسجد میں جگہ کی قلت کے سبب اعتکاف بیٹھنے کے خوہشمندوں سے آن لائن درخواست فارم داخل کرنے کی خواہش کی گئی ہے تاکہ قبل از وقت معتکفین کیلئے بہتر سے بہتر انتظامات کو یقینی بنایا جا سکے۔ شہر میں آخری عشرہ کے دوران سب سے بڑا معتکفین کا اجتماع مسجد عزیزیہ میں ہوتا ہے جہاں سینکڑوں بندگان خدا اعتکاف کے دوران عبادتوں میں مشغول ہوتے ہیں اور آخری عشرہ میں تلاش لیلۃالقدر و طاق راتوں کے اہتمام کیلئے بھی عامۃالمسلمین کی بڑی تعداد اسی مسجد میں نظر آتی ہے۔اس کے علاوہ شہر کی مختلف مساجد میں دعوت اسلامی کے زیر اہتمام اجتماعی اعتکاف کا اہتمام کیا جاتا ہے جس کی تیاریاں عروج پر ہیں۔

TOPPOPULARRECENT