Monday , December 18 2017
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد کو وبائی امراض سے محفوظ رکھنے اور باران رحمت کیلئے استغفار و دعائیں

حیدرآباد کو وبائی امراض سے محفوظ رکھنے اور باران رحمت کیلئے استغفار و دعائیں

شہر کے کئی مساجد میں اہتمام ، فرض نماز کے بعد ورد کرنے اور دعائیں کرنے کی تلقین ، مولانا احمد علی تاجی
حیدرآباد۔22جولائی (سیاست نیوز) شہر کی مختلف مساجد میں آج بعد نماز جمعہ استغفار اور بارش کیلئے خصوصی دعائیں کی گئی۔ دونوں شہروں میں نماز جمعہ کے موقعہ پر شہر میں پھیل رہے وبائی امراض کے تدارک کیلئے بھی دعائیں کرتے ہوئے ائمہ نے اس بات کی تلقین کی کہ جب شہر وبائی امراض و قحط سالی میں مبتلاء ہونے لگیں تو ایسے وقت میں استغفار کرتے ہوئے اللہ کے عذاب سے پناہ مانگنی چاہئے ائمہ و خطیب حضرات نے بتایا کہ جب بندے نافرمانی الہی کے مرتکب بنتے ہوئے گناہ کی طرف مائل ہونے لگتے ہیں تو ایسے وقت وبائی امراض اور قحط کی صورتحال اللہ کے عذاب کی علامات کی شکل میں نازل ہوتی ہیں۔ دونوں شہروں کی مختلف مساجد میں نماز جمعہ کے موقعہ پر اپنے خطاب کے دوران خطیب حضرات نے استغفار کی کثرت کی تلقین کرتے ہوئے کہا کہ ہر فرض نماز کے بعد استغفار ہماری نا فرمانیوں و گناہوں کی معافی کاسبب بن سکتا ہے اسی لئے خلوص دل کے ساتھ اللہ رب العزت کی رضا کی خاطر ہمیں استغفار کی کثرت کرنی چاہئے۔ شہر میں جاری وبائی امراض اور قحط سالی کی صورتحال سے بچنے کیلئے یہ ضروری ہے کہ امت مسلمہ اپنے رب کو راضی کروائے کیونکہ اسلاف و اکابرین کا طریقۂ کار یہی رہا۔ جب کبھی وبائی امراض پھیلے یا قحط جیسی صورتحال پیدا ہوئی تو ایسی صورت میں اللہ والوں نے رجوع الی اللہ ہوتے ہوئے استغفار کی تلقین کی ہے۔ علماء نے بتایا کہ آج ریاست وشہر میں جو خشک سالی کی صورتحال ہے وہ بھی اللہ کے عذاب کی علامات محسوس ہو رہی ہیں کیونکہ بعض علاقوں میںتباہ کن بارش ہے تو بعض علاقہ جات بھیانک خشک سالی کے دور سے گذر رہے ہیں اور اسی طرح ریاست کے کئی اضلاع وبائی امراض کی لپیٹ میں آتے جا رہے ہیں اور ان وبائی امراض کے پھیلنے کو روکنے کیلئے ضروری ہے کہ ہم توبہ و استغفار کے ساتھ اللہ سے مدد طلب کریں اور موسم باراں کے دوران رحمت والی بارش طلب کریں۔مولانا احمد علی تاجی خطیب و امام مسجد مولوی زماں خان شہیدؒ  شکر گنج نے بعد نماز جمعہ اجتماعی استغفار کا اہتمام کرواتے ہوئے اپیل کی کہ ہر مسجد میں فرض نمازوں کے بعد استغفار کیا جائے تاکہ اس صورتحال سے محفوظ رہا جا سکے۔ انہوں نے بتایا کہ اخبارات کے ذریعہ جو اطلاعات موصول ہو رہی ہیں ان کے مطابق وبائی امراض تیزی سے پھیل رہے ہیں اور ان وبائی امراض کے شکار مریضوں کیلئے اب دواخانوں میں بستر بھی نہیں ہیں۔ شہر کی دیگر کئی مساجد میں وبائی امراض میں مبتلاء مریضوں کی عاجلانہ صحت یابی کیلئے دعاؤں کے ساتھ ریاست بھر میں رحمت والی بارش کیلئے دعائیں کی گئی۔

TOPPOPULARRECENT