Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد یونیورسٹی انتظامیہ وپولیس کی تازہ صورتحال پر وضاحت

حیدرآباد یونیورسٹی انتظامیہ وپولیس کی تازہ صورتحال پر وضاحت

حیدرآباد 24 مارچ (سیاست نیوز) حیدرآباد سنٹرل یونیورسٹی میں طلبہ کا احتجاج آج بھی جاری رہا۔ یونیورسٹی انتظامیہ نے دعویٰ کیا ہے کہ یونیورسٹی میں میس اور پانی کی خدمات کچھ حد تک آج بحال کی گئی ہیں جوکہ آئندہ دو دن تک بھی جاری رہیں گی۔ دو یوم قبل وائس چانسلر کی واپسی کے مسئلہ پر شروع ہوئے احتجاج میں کل اُس وقت شدت پیدا ہوگئی جب حیدرآباد سنٹرل یونیورسٹی طلبہ کو پولیس نے حراست میں لیتے ہوئے جیل منتقل کردیا۔ علاوہ ازیں طالبات کیساتھ بدتمیزی کی شکایات منظر عام پر آئی۔ حیدرآباد یونیورسٹی انتظامیہ کی جانب سے ذرائع ابلاغ کے ذریعہ جو اطلاعات و خبریں شائع ہوئی ہیں اُسے غیر مصدقہ قرار دینے کی کوشش کرتے ہوئے دعویٰ کیا گیا ہے کہ یونیورسٹی انتظامیہ نے برقی، پانی کی سربراہی کو مسدود نہیں کیا تھا بلکہ اِس کا الزام یونیورسٹی نے غیر سماجی عناصر پر عائد کیا ہے لیکن اس بات کی وضاحت نہیں کی کہ وہ کون غیر سماجی عناصر ہیں جو اس طرح کی حرکت کرسکتے ہیں۔    ( سلسلہ صفحہ8 پر)

TOPPOPULARRECENT