Saturday , July 21 2018
Home / شہر کی خبریں / حیدرآبادی ماہر شوٹر نواب شفاعت علی خاں آدم خور بور بچے کو ہلاک کرنے میں کامیاب

حیدرآبادی ماہر شوٹر نواب شفاعت علی خاں آدم خور بور بچے کو ہلاک کرنے میں کامیاب

جلگاؤں میں کارروائی، مہارت کے استعمال پر عوام کا اظہار مسرت و اطمینان
حیدرآباد ۔ /10 ڈسمبر (سیاست نیوز) حیدرآباد کے مشہور شوٹر نواب شفاعت علی خاں نے پھر ایک مرتبہ آدم خور بور بچے کو مہاراشٹرا کے جلگاؤں ضلع میں گولی مارکر ہلاک کردیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ بور بچے نے 20 سے زائد گاؤں میں دہشت پھیلادی تھی اور 9 افراد پر حملہ کرتے ہوئے ان کے دھڑ سے سر الگ کردیا تھا ۔ آدم خور بور بچے کو پکڑنے کیلئے مہاراشٹرا فاریسٹ ڈپارٹمنٹ نے 20 پنجرے اور خصوصی ٹیمیں تشکیل دی تھیں لیکن اسے پکڑنے میں ناکام رہے ۔ جلگاؤں ڈیویژن کے چیف کنزرویٹر فاریسٹ نے نواب شفاعت علی خاں کو آدم خور بور بچے کو زندہ پکڑنے یا اسے گولی مارنے کیلئے خصوصی طور پر طلب کیا تھا جس کے نتیجہ میں مسٹر شفاعت علی خاں نے اپنی ٹیم کے ہمراہ 4 ڈسمبر کو جلگاؤں پہونچ کر علاقہ کا معائنہ کیا اور یہ پتہ لگایا کہ دراصل دو آدم خور بور بچے ہیں جو عوام کو نشانہ بنارہے ہیں ۔ کل رات آدم خور بور بچہ پمپر ماسا موضع میں دیکھا گیا جس کے بعد شفاعت علی خاں نے اپنی ٹیم کے ساتھ چوکسی اختیار کرتے ہوئے اسے پکڑنے کی کوشش کی لیکن بور بچے نے ان پر حملے کی کوشش کی جس کے نتیجہ میں شفاعت علی خاں نے اپنی میگنم رائفل کی مدد سے اسے گولی مارنے میں کامیاب ہوگئے ۔ بور بچے کو ہلاک کرنے کے بعد جلگاؤں ضلع کی عوام نے راحت کی سانس لی اور نواب شفاعت علی خاں اور ان کی ٹیم کی ستائش کی ۔ بعد ازاں انہیں ایک جلوس کی شکل میں تمام علاقہ میں گھمایا گیا ۔

TOPPOPULARRECENT