Wednesday , December 19 2018

حیدرآباد ایرپورٹ کے نام کی تبدیلی پر راجیہ سبھا میں احتجاج

کانگریس ارکان کی نعرہ بازی، حکومت کے آمرانہ رویہ پر تنقید، کارروائی دو مرتبہ ملتوی

کانگریس ارکان کی نعرہ بازی، حکومت کے آمرانہ رویہ پر تنقید، کارروائی دو مرتبہ ملتوی
نئی دہلی 25 نومبر (پی ٹی آئی) حیدرآباد کے ڈومیسٹک ایرپورٹ کے نام کی تبدیلی اور آنجہانی وزیراعظم راجیو گاندھی کا نام حذف کرنے کے خلاف راجیہ سبھا میں کانگریس نے آج زبردست احتجاج کیا اور حکومت پر من مانی تبدیلیوں کا الزام عائد کیا۔ وقفہ صفر کے دوران راجیہ سبھا میں ڈپٹی لیڈر آنند شرما نے یہ مسئلہ اٹھاتے ہوئے کہاکہ حکومت کے یہ اقدامات ناقابل قبول ہیں اور ہم ایوان کی کارروائی چلنے نہیں دیں گے۔ کانگریس ارکان نعرے لگاتے ہوئے ایوان کے وسط میں پہونچ گئے اور وہ پلے کارڈس تھامے ہوئے تھے اس کی وجہ سے ماقبل لنچ سیشن کو دو مرتبہ ملتوی کرنا پڑا۔ کانگریس ارکان حیدرآباد میں راجیو گاندھی انٹرنیشنل ایرپورٹ کے ڈومیسٹک ٹرمنل کو آنجہانی این ٹی راما راؤ سے موسوم کرنے کے خلاف احتجاج کررہے تھے۔ وزارت شہری ہوا بازی نے گزشتہ ہفتہ اِس ضمن میں حکم جاری کیا تھا۔ آنند شرما نے سرکاری بنچس کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاکہ ایرپورٹ کا نام تبدیل کرنے کا آمرانہ طرز عمل ہمارے لئے ناقابل قبول ہے۔ سینئر پارٹی لیڈر مدھو سدن میستری کو دیگر 10 ارکان بشمول وی ہنمنت راؤ اور سابق وزیر جے ڈی سیلم کے ساتھ ایوان کے وسط میں پہونچتے ہوئے دیکھا گیا۔ کانگریس ارکان مسلسل نعرے لگارہے تھے جس پر نائب صدرنشین پی جے کورین نے برہم ہوکر آنند شرما سے کہاکہ وہ ڈسپلن برقرار رکھیں۔ جب ارکان نے اپنا احتجاج جاری رکھا تو کورین نے ایوان کی کارروائی تقریباً 10 منٹ کے لئے ملتوی کردی اور جب دوپہر میں دوبارہ کارروائی شروع ہوئی تو یہی مناظر دیکھنے میں آئے۔ قائد راجیہ سبھا اور وزیر فینانس ارون جیٹلی جس وقت نئے وزراء کو متعارف کرارہے تھے کانگریس ارکان نعرے لگاتے ہوئے ایوان کے وسط میں پہونچ گئے۔ صدرنشین حامد انصاری نے احتجاجی ارکان سے خاموش ہونے کی خواہش کی تاکہ وقفہ سوالات شروع کیا جاسکے لیکن کانگریس ارکان اپنے موقف پر قائم تھے چنانچہ حامد انصاری نے ایوان کی کارروائی دو بجے تک کیلئے ملتوی کردی۔ لوک سبھا میں بھی ٹی آر ایس رکن پی ونود کمار نے یہ مسئلہ اُٹھاتے ہوئے حکومت سے فیصلہ واپس لینے کا مطالبہ کیا لیکن تلگودیشم کے سرینواس راؤ نے اِس کی مخالفت کی اور کہاکہ حکومت نے غلطی کو درست کرلیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT