Wednesday , November 22 2017
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد کی کل ہند صنعتی نمائش میں مزید توسیع دینے کا مطالبہ

حیدرآباد کی کل ہند صنعتی نمائش میں مزید توسیع دینے کا مطالبہ

سوسائٹی کی آج ایوارڈ تقریب، توسیع کیلئے اعلان متوقع، نوٹ بندی سے تجارت متاثر ہونے کا ادعا

حیدرآباد۔12فروری (سیاست نیوز) نمائش پر نوٹ بندی کے اثرات کے سبب تجارت متاثرہونے کا ادعا کرتے ہوئے تاجرین نے نمائش کے ایام میں کچھ یوم کی توسیع کیلئے نمائش سوسائٹی سے نمائندگی کی ہے ۔ نمائش 2017میں حصہ لینے والے تاجرین نے نمائش سوسائٹی کو دی گئی درخواست میں اس بات کی خواہش کی ہے کہ جاریہ کل ہند صنعتی نمائش کے ایام میں کچھ دن کی توسیع فراہم کی جا سکے تاکہ تاجرین کو نقصان سے بچایا جا سکے۔ سیکریٹری نمائش سوسائٹی مسٹر آدتیہ مارگم نے اس بات کی توثیق کی کہ تاجرین کی جانب سے یہ نمائندگی موصول ہوئی ہے لیکن نمائش سوسائٹی جنرل باڈی کے فیصلہ کے مطابق آفات سماوی یا کرفیو کی صورت میں ہی نمائش کے ایام میں توسیع کی گنجائش ہے اسی لئے اس مسئلہ پر تاحال سوسائٹی نے کوئی غورنہیں کیا ہے۔ کل ہند صنعتی نمائش میں ملک کے مختلف مقامات سے پہنچنے والے تاجرین نے تحریری نمائندگی حوالے کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں کرنسی تنسیخ کے اثرات کے سبب ابتدائی ایام میں کاروبار کافی حد تک متاثر رہا جس کے سبب وہ نقصان میں ہیں لیکن اب بتدریج کاروبار میں نمایاں بہتری آنے لگی ہے اسی لئے اس بات کی خواہش کی گئی ہے کہ ایک ہفتہ کی توسیع دیئے جانے کی صورت میں کچھ حد تک نقصان کی پابجائی ممکن ہے۔نمائش میں اسٹال لگانے والے بیرونی تاجرجن کا تعلق ملک کی مختلف ریاستوں سے ہے کے بموجب ماہ جنوری کے دوران کاروبار انتہائی سست رہا جس کے سبب انہیں کافی نقصان برداشت کرنا پڑا اور وہ نمائش کے اختتام کا بھی انتظار کرنے کے موقف میں نہیں تھے لیکن ماہ فروری کے ساتھ حالات میں تیزی سے تبدیلی آتی نظر آرہی ہے اور نمائش میں گہما گہمی میں اضافہ بھی دیکھا جانے لگا ہے جس کے سبب وہ چاہتے ہیں کہ نمائش کے ایام میں توسیع دی جائے تاکہ وہ نقصان سے بچ سکیں۔ تاجرین کا کہنا ہے کہ ملک بھر میں ماہ جنوری کے دوران تجارت متاثر رہی اور اب اس میں کسی حد تک بہتری دیکھی جا رہی ہے اسی لئے نمائش سوسائٹی کو تاجرین کی درخواست پر غور کرنا چاہئے۔مسٹر آدتیہ مارگم نے بتایا کہ نمائش سوسائٹی کی جانب سے اس مسئلہ پر فیصلہ کرنا دشوار ہے کیونکہ ایام نمائش متعین کئے جانے کے بعد اس کی اطلاع تمام متعلقہ محکمہ جات کو فراہم کی جاتی ہے اور اچانک ایام میں اضافہ کا فیصلہ ایک مرتبہ پھر تمام محکمہ جات کو توسیع شدہ ایام کیلئے متحرک رہنا پڑے گا۔ تاجرین نے حکومت سے بھی اپیل کی ہے کہ وہ نمائش کے انتظامی امور میں متحرک محکمہ جات کو ہدایت دیتے ہوئے اس کل ہند صنعتی نمائش کو توسیع دینے کا فیصلہ کرے۔ سیکریٹری نمائش سوسائٹی مسٹر آدتیہ مارگم نے بتایا کہ نمائش 2017کے دوران دوپہر کے وقت گاڑیوں میں پہنچنے والوں کی تعداد میں 60فیصد تک کا اضافہ ریکارڈکیا گیا ہے جبکہ نمائش میں بغرض سیاحت پہنچنے والوں کی تعداد میں کوئی کمی نہیں ہے۔ تاجرین نے توقع ظاہر کی کہ 13فروری کو نمائش میں منعقد ہونے والی ایوارڈ تقریب کے دوران حکومت اور نمائش سوسائٹی کی جانب سے توسیع کا اعلان ممکن ہے۔حکومت کے ذرائع اور نمائش سوسائٹی کے عہدیداروں کا کہنا ہے کہ اگر نمائش کے ایام میں اضافہ کیا جاتا ہے تو ایسی صور ت میں نمائش سوسائٹی پر مالی بوجھ عائد ہوگا اور متعلقہ محکمہ جات کی سرگرمیوں میں بھی اچانک اضافہ مشکل کا سبب بنے گا کیونکہ ابتداء سے یہ منصوبہ کے مطابق نمائش کے اختتام کے بعد کی سرگرمیوں کو دیگر محکمہ جات قطعیت دے چکے ہوتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT