Tuesday , June 26 2018
Home / ہندوستان / خاتون نکسلائیٹ کی خودسپردگی

خاتون نکسلائیٹ کی خودسپردگی

رائے پور۔ 23 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) چھتیس گڑھ کے بستر ڈیویژن میں ایک خطرناک خاتون نکسلائیٹ نے بالکل ککسی فلمی کہانی کی طرح پولیس کے روبرو خودسپردگی اختیار کرلی کیونکہ اس کے بھائی نے اسے خودسپرد ہونے کیلئے دلائل پیش کرتے ہوئے قائل کردیا کہ خودسپردگی میں ہی اس کا فائدہ ہے۔ یہ بھائی کوئی اور نہیں بلکہ محکمہ پولیس سے وابستہ ایک آفیسر ہے

رائے پور۔ 23 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) چھتیس گڑھ کے بستر ڈیویژن میں ایک خطرناک خاتون نکسلائیٹ نے بالکل ککسی فلمی کہانی کی طرح پولیس کے روبرو خودسپردگی اختیار کرلی کیونکہ اس کے بھائی نے اسے خودسپرد ہونے کیلئے دلائل پیش کرتے ہوئے قائل کردیا کہ خودسپردگی میں ہی اس کا فائدہ ہے۔ یہ بھائی کوئی اور نہیں بلکہ محکمہ پولیس سے وابستہ ایک آفیسر ہے جسے اپنی بہن کے مستقبل کی فکر لاحق تھی۔ 32 سالہ شانتی کونجم نے کل خودسپردگی اختیار کی۔ انسپکٹر جنرل آف پولیس (بستر رینج) ایس آر پی کلوری نے یہ بات بتائی۔ انہوں نے کہا کہ پولیس آفیسر انیل شانتی کا بھائی ہے اور اسی نے اپنی بہن کو خودسپردگی کیلئے آمادہ کیا۔ 2005ء میں وہ اپنے ارکان خاندان سے اس وقت جدا ہوگئی جب سلوا جوڈوم نامی نکسلائیٹ مخالف تحریک اپنے عروج پر تھی۔

TOPPOPULARRECENT