Monday , December 18 2017
Home / شہر کی خبریں / خادم الحجاج کیلئے حاجیوں کی مدد و رہنمائی ضروری :منگل کو انتخاب

خادم الحجاج کیلئے حاجیوں کی مدد و رہنمائی ضروری :منگل کو انتخاب

عازمین حج کا چھٹاتربیتی اجتماع: اسپیشل آفیسر پروفیسر ایس اے شکور اور علما کرام کا خطاب
حیدرآباد11 جون (پریس نوٹ ) اسپیشل آفیسر تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے کہا کہ حج امور قریب قریب پورے ہورہے ہیں۔ منگل 13 جون کو خادم الحجاج کا انتخاب ہوگا۔ 14خادم الحجاج کا قرعہ کے ذریعہ انتخاب ہوگا۔ 212 درخواستیں وصول ہوئی ہیں۔ اگر خادم الحجاج کے خلاف شکایات وصول ہوں اور وہ عدم کارکردگی کا مظاہرہ کریں تو انکے خلاف کارروائی کی جائے گی اور ان پر خر چ کی گئی رقم واپس وصول کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ رمی جمار کے لئے ہر ملک کے لئے الگ الگ وقت مقرر کیا جاتا ہے اس لئے حاجی صاحبان اسی وقت جائیں جو ان کے لئے مقرر کیا گیا ہے۔ شیطان کو صرف کنکر ماریں‘ چپل چھتری اور پین وغیرہ نہ ماریں یہ غلط طریقہ ہے۔ پہلے رمی جمار کا راستہ تنگ تھا اب اس میں توسیع کی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ عازمین کرام اپنے اس مقدس سفر کے دوران صبر و تحمل کا جتنا زیادہ ہوسکے مظاہرہ کریں اور جلد بازی ‘ بے چینی اور اضطراب کا مظاہرہ نہ کریں‘ انہوں نے آج مہک فنکشن ہال چندرائن گٹہ میں عازمین حج کے چھٹے تربیتی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے یہ بات کہی۔ عازمین کی روانگی 11 اگست سے 22اگست تک ہے ۔ حیدرآباد سے تلنگانہ ‘ آندھرا پردیش اور کرناٹک کے بعض اضلاع کے عازمین کی روانگی عمل میں آئے گی۔ ممبئی میں 14جون کو اجلاس ہے جس میں تمام امور طئے پائیں گے۔ سم کارڈ یہیں پر دینے کی کوشش کی جارہی ہے۔ پروفیسر ایس اے شکور نے مزید کہا کہ اب حج مصارف کی دوسری قسط آخری تاریخ 19جون سے قبل بینک چالان ادا کردیں۔ رباط کے عازمین ان کی مقررہ رقم ادا کردیں۔ قربانی حج کمیٹی کے ذریعہ دینا چاہتے ہیں تو وہ مزید 8,000روپئے ادا کریں۔اگر اپنے طور پر قربانی دینا ہے تو پھر یہ پیسے ادا کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔یہ مرحلہ ہوجانے کے بعد اب صرف چند امور ہی باقی رہ جاتے ہیں جن میں ویکسی نیشن سب سے اہم ہے اور عید کے فوری بعد یہ مرحلہ بھی مکمل کرلیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ تلنگانہ کے تمام اضلاع میں ؎ ویکسی نیشن دیا جائے گا۔ انہو ںنے کہا کہ تمام عازمین ان کی روانگی کے مقررہ وقت سے 48گھنٹے قبل حج ہاؤز میں رپورٹ کریں۔ اضلاع کے عازمین کا قیام حج ہاؤز میں ہی رہے گا۔ شہر کے عازمین رپورٹ کرنے کے بعد گھر چلے جائیں اور10گھنٹے قبل حج ہاؤز آجائیں جہاں ضروری امور کی تکمیل ہوگی۔ انہوں نے عازمین کے سوالات کے جوابات بھی دیئے۔مولانامفتی امجد حسین نے اپنے خطاب میں مناسک حج و عمرہ اور احرام کی شرائط و تفصیلات بیان کرتے ہوئے کہا کہ عرفات کا میدان وہ ہے جہاں اللہ تعالیٰ تمام لوگوں کے گناہ معاف کردیتے ہیں۔ اس لئے تمام حاجی میدان عرفات میں زیادہ سے زیادہ دعائیں کریں’ اپنے لئے بھی اور تمام مسلمانو ں کے لئے بھی۔انہوں نے احادیث کے حوالے سے کہا کہ حاجی صاحبان حج سے واپسی کے بعد کوئی ایسا عمل نہ کریں جو خلاف شریعت اور خلاف سنت ہو۔ انہوں نے حج کے پانچ دنوں کی مصروفیات اورمناسک کی تفصیلات بیان کرتے ہوئے کہا10 ذی الحجہ کا دن بہت اہم ہے جہاں حاجیوں کو مزدلفہ میں قیام کرتے ہوئے ایک فرض اور چار واجبات ادا کرنا ہوگا۔ جمرہ عقبہ پر سات کنکریاں علیحدہ علیحدہ ماریں۔قربانی کا وقت ہوجانے کے بعد حلق کروالیں یعنی سر منڈا لیں۔ اس کے بعد مکہ معظمہ جاکر حج کے طواف کی نیت سے طواف زیارت کرلیں۔ اگر یہ اس دن ممکن نہ ہو تو 12ذی الحجہ کی شام تک کرلیں۔ طواف وداع واپسی سے قبل کبھی بھی کرسکتے ہیں ۔ انہوں نے عمرہ اور حج کے ارکان اورمناسک تفصیل کے ساتھ بیان کئے۔ جناب عرفان شریف ‘ جناب سید اکبر حسین‘ جناب فاروق افتخار‘ جناب سید مقبول ‘ جناب وسیم نے انتظامات کی نگرانی کی۔ اجتماع میں عازمین کی کثیر تعداد شریک تھی خواتین کے لئے بالائی منزل پر علیحدہ انتظام کیا گیا ۔

TOPPOPULARRECENT