Tuesday , April 24 2018
Home / دنیا / خالدہ ضیاء پر منصفانہ مقدمہ چلانے امریکہ کا زور

خالدہ ضیاء پر منصفانہ مقدمہ چلانے امریکہ کا زور

غیرجانبدارانہ سماعت کیلئے بنگلہ دیش کی حوصلہ افزائی : امریکہ
واشنگٹن ۔ 9 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) امریکہ نے بنگلہ دیش پر اپنی ایک سابق وزیراعظم خالدہ ضیاء کے خلاف منصفانہ مقدمہ کو یقینی بنانے پر زور دیا ہے جنہیں رشوت کے ایک مقدمہ میں پانچ سال کی سزائے قید بامشقت دی گئی ہے۔ 72 سالہ خالدہ ضیاء ماضی میں تین مرتبہ وزیراعظم کے منصب پر فائز رہ چکی ہیں۔ انہیں اپنے مرحوم شوہر اور فوجی حکمراں سے سیاستداں بننے والے ضیاء الرحمن سے موسوم ضیاء آر فینسج ٹرسٹ کو ملنے والے بیرونی چندوں میں 21 ملین ٹکا (250,000 ڈالر) کی خردبرد کے جرم میں ڈھاکہ کی خصوصی عدالت نے یہ سخت سزاء دی ہے۔ امریکی دفتر خاوجہ کی ترجمان نے کہا کہ ’’بنگلہ دیش نیشنلسٹ پارٹی (بی این پی) کی سربراہ خالدہ ضیاء کو دی گئی سزاء سے ہم باخبر ہیں اور کسی مقدمہ کی منصفانہ سماعت کی طمانیت کیلئے ہم بنگلہ دیش کی حوصلہ افزائی کریں گے‘‘۔ اس فیصلہ میں عدالت نے خالدہ ضیاء کے مفرور بیٹے اور ان کی پارٹی بی این پی کے سینئر نائب صدر طارق رحمن پر بھی بیک وقت غیاب میں دیگر چار ملزمین کے ساتھ مقدمہ چلایا گیا جنہیں 10 سال کی قید دی گئی ہے۔ خالدہ ضیاء اور ان کے تین ساتھی ضیاء چیریٹیبل ٹرسٹ سے چار لاکھ امریکی ڈالر کے غبن کے ملزم تھے۔ ان پر دیگر 2,77,000 کے امریکی ڈالر مالیتی فنڈس کا خردبرد کرنے والے پانچ رکنی گروپ کی قیادت کا الزام بھی ہے۔

TOPPOPULARRECENT