Sunday , January 21 2018
Home / دنیا / خالدہ ضیاء کے بیٹے طارق رحمن کو میڈیا کوریج نہ دیا جائے

خالدہ ضیاء کے بیٹے طارق رحمن کو میڈیا کوریج نہ دیا جائے

ڈھاکہ ۔ 7 جنوری۔( سیاست ڈاٹ کام ) بنگلہ دیش ہائی کورٹ نے آج قائد اپوزیشن خالدہ ضیاء کے روپوش بیٹے کے کسی بھی بیان کو الیکٹرانک اور پرنٹ میڈیا میں پیش کرنے پر امتناع عائد کردیا ہے ۔ یاد رہے کہ اس وقت ملک میںمتنازعہ انتخابات کے ایک سال مکمل ہونے پر زبردست سیاسی کشیدگی پائی جاتی ہے ۔ ہائیکورٹ نے حکومت کو ہدایت کی ہے کہ وہ اس بات کو یقینی ب

ڈھاکہ ۔ 7 جنوری۔( سیاست ڈاٹ کام ) بنگلہ دیش ہائی کورٹ نے آج قائد اپوزیشن خالدہ ضیاء کے روپوش بیٹے کے کسی بھی بیان کو الیکٹرانک اور پرنٹ میڈیا میں پیش کرنے پر امتناع عائد کردیا ہے ۔ یاد رہے کہ اس وقت ملک میںمتنازعہ انتخابات کے ایک سال مکمل ہونے پر زبردست سیاسی کشیدگی پائی جاتی ہے ۔ ہائیکورٹ نے حکومت کو ہدایت کی ہے کہ وہ اس بات کو یقینی بنائے وہ طارق رحمن کی تقاریر یا بیانات کو نہ تو شائع کرے اور نہ ہی اُس کا ٹیلی کاسٹ اور براڈ کاسٹ کرے ۔ سوشل میڈیا میں بھی طارق رحمن کی تقاریر اپ لوڈ کرنے پر بھی اُس وقت تک امتناع عائد کیا گیا ہے جب تک طارق رحمن روپوشی سے باہر نہیں آجاتے۔ ڈپٹی اٹارنی جنرل بسواجیت رائے نے میڈیا کو یہ بات بتائی ۔ جسٹس قاضی رضاء الحق اور جسٹس ابوطاہر محمد سیف الرحمن پر مشتمل ایک دو رکنی بنچ نے یہ احکامات جاری کئے کیونکہ سپریم کورٹ کی وکیل نسرین صدیقی نے اس سلسلہ میں ایک درخواست کا ادخال کیا تھا جہاں انھوں نے ملک میں سیاسی کشیدگی کے پیش نظر طارق رحمن کے بیانات اور تقاریر کو براڈکاسٹ ، ٹیلی کاسٹ اور اخبارات بھی شائع نہ کرنے کی عدالت سے خواہش کی تھی کہ وہ اس سلسلہ میں احکامات جاری کرے ۔

TOPPOPULARRECENT