Friday , September 21 2018
Home / شہر کی خبریں / خانگی بجٹ اور اقلیتی تعلیمی ادارے نامساعد حالات کا شکار : جناب عامر علی خاں

خانگی بجٹ اور اقلیتی تعلیمی ادارے نامساعد حالات کا شکار : جناب عامر علی خاں

حکومت سے نمائندگی پر زور ، مختلف اسکولس کے منتظمین کے اجلاس سے نیوز ایڈیٹر سیاست کا خطاب
حیدرآباد ۔ 11 ۔ جولائی : ( پریس نوٹ) : خانگی بجٹ اور اقلیتی اداروں کی جانب سے چلائے جانے والے انگریزی میڈیم اسکولس کا ایک اجلاس ماونٹ مرسی اسکول واقع ٹولی چوکی پر منعقد ہوا ۔ اس اجلاس میں شیخ پیٹ منڈل گولکنڈہ منڈل اور پرانے شہر کے اسکولس کے منتظمین نے شرکت کی ۔ اپنی نوعیت کے پہلے اور منفرد اجلاس کی سرپرستی جناب عامر علی خاں نیوز ایڈیٹر روزنامہ سیاست نے کی ۔ ارشد پیرزادہ نے جناب عامر علی خاں اور دیگر شرکاء کا استقبال کیا ۔ انہوں نے جناب عامر علی خاں کا تعارف پیش کیا اور سیاست اخبار کی گرانقدر خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے خراج تحسین پیش کیا اور بجٹ اسکولس کے مسائل سے نیوز ایڈیٹر سیاست کو واقف کروایا کہ کس قدر نا مساعد حالات میں یہ مدارس قوم اور ملت کی خدمات انجام دے رہے ہیں ۔ بجٹ اسکولس کے بارے میں یہ بات بتائی گئی کہ انتہائی واجبی فیس کے عوض طلباء کو معیاری تعلیم فراہم کی جارہی ہے ۔ انہوں نے جناب عامر علی خاں سے گزارش کی کہ وہ ان اداروں کی سرپرستی کریں ۔ جناب عامر علی خاں نے اپنی مخاطبت میں زرین مشورے دئیے اور 32 اسکولس کے انتظامیہ کے نمائندوں سے مسائل کو سماعت کیا ۔ انہوں نے کہا کہ یہ پہلا موقع ہے اسکولس کے سربراہان راست طور پر مسائل سے واقف کروایا ۔ انہوں نے اس بات پر حیرت ظاہر کی کہ کس طرح دس تا پندرہ فیصد طلباء ہر سال فیس Defaulters ہیں ۔ اوسطا دو تا تین لاکھ سالانہ فیس ادا نہیں کی جاتی ۔ یہ ایک بہت بڑا بوجھ ہے جو ہر اسکول کو برداشت کرنا پڑرہا ہے ۔ انہوں نے اس بات پر بھی حیرت ظاہر کی کہ کس طرح سطح غربت سے نیچے رہنے والے طلبہ کو مفت تعلیم کا موقع فراہم کیا جارہا ہے ۔ جس میں کہیں بھی ذکر نہیں کیا جاتا ۔ انہوں نے مشورہ دیا کہ اتحاد اور اتفاق کا مظاہرہ کریں اور سہ ماہی اجلاس منعقد کرتے ہوئے اپنے مسائل سے حکومت اور عوام کو واقف کروائیں ۔ انہوں نے تیقن دیا کہ وہ اخبار میں اسکولس کے مسائل پر خبروں کی اشاعت کے لیے ضرور تعاون کریں گے ۔ شرکاء اجلاس نے اتفاق کیا کہ اپنے مسائل سے حکومت کو واقف کروائیں گے ۔ اور وقفہ وقفہ سے اجلاس منعقد کرنے کا بھی عزم کیا ۔ تمام شرکاء نے اتفاق کیا کہ مسائل کے حل کے لیے اس طرح کے جلسہ کیے جانے چاہئے ۔ 32 مدارس کے کرسپانڈنٹس جن میں خواتین کی قابل لحاظ تعداد تھی اجلاس میں شرکت کی جن میں قابل ذکر جناب محمد صابر ، جناب ایم اے فاروقی ، محترمہ نجمہ سلطانہ ، محترمہ مریم ، محترمہ شاکرہ سجاد ، شریمتی راج دیوی ، جناب احمد ادریس شریف ، جناب سید خلیل الرحمن ، جناب سید سلطان ، جناب سید فخر الدین احمد اور جناب سید محمود اشرف وغیرہ شامل ہیں ۔ محترمہ فاطمہ فاروقی پرنسپل ماونٹ مرسی اسکول نے اس اجلاس کا انتظام نہایت خوش اسلوبی سے کیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT