Saturday , November 18 2017
Home / بچوں کا صفحہ / خرگوش اور کچھوا

خرگوش اور کچھوا

سنو بچو! اک تیز خرگوش تھا
گھنی جھاڑیوں میں وہ روپوش تھا
اسے اپنے اوپر بڑا ناز تھا
مگر یہ بھی قدرت کا اک راز تھا
بڑا جوش تھا اس کی رفتار میں
مکرو مستی تھی گفتار میں
ملی اس کو فرصت کی جب اک گھڑی
نظر ایک کچھوے پہ اس کی پڑی
بہت دھیمی کچھوے کی رفتار تھی
مگر ہر طرف سے نظر ہوشیار تھی
یہ خرگوش جو اپنی شوخی میں تھا
اکڑکر یہ کچھوے سے کہنے لگا
بھلا کیسی تیری یہ رفتار ہے
لگے ایسا جیسے تو بیمار ہے
یہ بولے میاں کچھوے خرگوش سے
نہ اترا ذرا بات کر ہوش سے
چلو دوڑ ہوجائے میدان میں
بتادوں کہ ہے کون کس شان میں
ہوئے دونوں پھر سوئے منزل رواں
مگر پہلے پہنچے تھے کچھوے میاں
نہ تھا اتنا خرگوش ثابت قدم
گنوایا فقط سو کے اپنا بھرم
نہ کھونا کبھی خواب خرگوش میں
سدا بچو رہنا مگر ہوش میں
جو کام اپنا محنت سے کرتا رہے
نشاں اس کو منزل کا پہلے ملے

TOPPOPULARRECENT