Tuesday , January 16 2018
Home / جرائم و حادثات / خفیہ ٹھکانوں پر پکوان گیاس کی غیر مجاز ریفلنگ

خفیہ ٹھکانوں پر پکوان گیاس کی غیر مجاز ریفلنگ

پولیس پر بھی سازباز میں ملوث کا الزام ، کارروائی کے دوران 6 افراد گرفتار

پولیس پر بھی سازباز میں ملوث کا الزام ، کارروائی کے دوران 6 افراد گرفتار

حیدرآباد ۔ 10 ۔ جون : ( سیاست نیوز ) : کاچی گوڑہ میں سلسلہ وار سیلنڈر بم دھماکوں کے بعد سٹی پولیس نے چوکسی اختیار کرلی ہے اور ان غیر مجاز ٹھکانوں کے خلاف کارروائی کا آغاز کردیا ہے ۔ جہاں غیر قانونی طور پر پکوان گیاس سیلنڈر کو ریفل کیا جاتا ہے ۔ تاہم ان ٹھکانوں کو آبادیوں میں برسر عام سرگرمیوں پر پولیس سے سازباز کے بھی الزامات پائے جاتے ہیں۔ اس خصوص میں غیر قانونی ٹھکانوں پر کارروائی کرتے ہوئے ویسٹ زون پولیس نے 6 افراد کو گرفتار کرلیا ۔ اس خصوص میں پریس کانفرنس کو مخاطب کرتے ہوئے ڈی سی پی ویسٹ زون مسٹر ستیہ نارائنا نے بتایا کہ غیر قانونی طور پر پکوان گیاس سیلنڈر کی ریفل کرنے والے 6 افراد کو گرفتار کرلیا ۔ پولیس نے بورا بنڈہ ، ایس آر نگر حدود سے دو افراد 28 سالہ محمد غوث اور 30 سالہ شیخ ایوب ، 50 سالہ محمد احمد شریف اور 40 سالہ عبدالستار کو گرفتار کرلیا ۔ پولیس لنگر حوض نے باپو نگر میں دھاوا کرتے ہوئے 39 سالہ وینکٹ روی کانت کو گرفتار کرلیا اور گولکنڈہ پولیس نے 34 سالہ محمد قیصر بن مسعود کو ریتی گلی میں کارروائی کے دوران گرفتار کرلیا ۔ پولیس نے اپنی کارروائی کے دوران کل 90 سیلنڈرز کو ضبط کرلیا ۔ جن میں 35 بڑے سیلنڈر اور 55 چھوٹے سیلنڈر شامل ہیں جن میں کمرشیل اور ڈومسٹک سیلنڈر بھی پائے جاتے ہیں ۔ غیر قانونی طور پر سرکاری کمپنیوں کے سیلنڈر کو زائد قیمت پر حاصل کیا جاتا ہے اور ان سیلنڈر کی گیاس کو خانگی کمپنیوں کے سیلنڈر میں منتقل کیا جاتا ہے ۔ خانگی اور سرکاری سیلنڈر میں قیمتوں کے فرق کا ان افراد کو فائدہ ہوتا ہے اور پولیس پر ایسے الزامات بھی پائے جاتے ہیں کہ ان سب کارروائیوں کا پولیس کو بہ خوبی علم ہوتا ہے لیکن پولیس سازباز کرتے ہوئے ان معاملات کو دیکھا ان دیکھا کررہی ہے تاہم گذشتہ روز کاچی گوڑہ کے علاقہ میں پیش آئے واقعہ کے بعد نئے سٹی کمشنر پولیس کی ہدایت کے بعد پولیس شہر بھر میں متحرک ہوگئی اور کارروائیوں پر توجہ دے رہی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT