Tuesday , September 25 2018
Home / Top Stories / خلیج کو ایران سے خطرات لاحق، شاہ سلمان کا انتباہ

خلیج کو ایران سے خطرات لاحق، شاہ سلمان کا انتباہ

ریاض ۔ 5 ۔ مئی (سیاست ڈاٹ کام) سعودی فرمانروا شاہ سلمان نے ایران سے لاحق خطرات کے بارے میں خلیجی ممالک کو خبردار کیا ہے، وہ آج خلیج تعاون کونسل (جی سی سی) چوٹی اجلاس منعقدہ ریاض سے صدارتی خطاب کر رہے تھے ۔ اس اجلاس میں صدر فرانس فرانکوئیس ہالینڈ اعزازی مہمان تھے اور انہوں نے کہا کہ فرانس خلیجی ممالک کے ساتھ ہے۔ یمن میں حوثی باغیوں کے خ

ریاض ۔ 5 ۔ مئی (سیاست ڈاٹ کام) سعودی فرمانروا شاہ سلمان نے ایران سے لاحق خطرات کے بارے میں خلیجی ممالک کو خبردار کیا ہے، وہ آج خلیج تعاون کونسل (جی سی سی) چوٹی اجلاس منعقدہ ریاض سے صدارتی خطاب کر رہے تھے ۔ اس اجلاس میں صدر فرانس فرانکوئیس ہالینڈ اعزازی مہمان تھے اور انہوں نے کہا کہ فرانس خلیجی ممالک کے ساتھ ہے۔ یمن میں حوثی باغیوں کے خلاف سعودی زیر قیادت فضائی حملوں پر بین الاقوامی تشویش کے پس منظر میں یہ کانفرنس منعقد ہوئی۔ اس کے علاوہ جہادیوں سے لاحق خطرات اور حریف ایران سے خلیجی ممالک کی تشویش کی بناء یہ کانفرنس کافی اہمیت کی حامل رہی ۔ شاہ سلمان نے ایران کا راست حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ بیرونی خطرہ سے محاذ آرائی کی ضرورت ہے جو اپنا کنٹرول بڑھانا اور اپنا اثر و رسوخ مسلط کرنا چاہتا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ اس رجحان کی وجہ سے علاقائی استحکام کو خطرہ لاحق ہے ۔ فرانکوئیس ہالینڈ جی سی سی چوٹی اجلاس میں شرکت کرنے والے پہلے مغربی لیڈر ہیں ۔انہوں نے کہا کہ فرانس اس علاقہ کو لاحق خطرات سے تعلق خاطر کا اظہار کرتا ہے اور اس بات کی یقین دہانی کراتاہے کہ فرانس آپ کے ساتھ ہے۔ ریاض چوٹی اجلاس میں بحرین ، کویت ، عمان ، قطر ، سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کے قائدین کو متحد ہونے کا موقع فراہم ہوا۔ اس دوران یمن کے باغیوں نے سعودی عرب میں راکٹس اور مارٹر فائر کئے جس کے نتیجہ میں دو عام شہری ہلاک ہوگئے اور ان باغیوں نے پانچ سپاہیوں کو اپنے قبضہ میں کرلیا۔ سعودی عرب کی سرکاری ایرلائینس نے سرحدی علاقہ نجران میں پروازیں منسوخ کردیں اور تمام اسکولس بند کردیئے

TOPPOPULARRECENT