Friday , November 17 2017
Home / شہر کی خبریں / خواتین کو مساویانہ مواقع فراہم کرنے نائب صدر جمہوریہ کی وکالت

خواتین کو مساویانہ مواقع فراہم کرنے نائب صدر جمہوریہ کی وکالت

ملک کی ترقی کے لیے اسکل ڈیولپمنٹ کی شدید ضرورت ، حیدرآباد اڈوانسڈ ٹریننگ سنٹر میں انسٹی ٹیوٹ کا سنگ بنیاد
حیدرآباد ۔ 16 ۔ ستمبر : ( سیاست نیوز ) : نائب صدر جمہوریہ ایم وینکیا نائیڈو نے خواتین کو مساویانہ مواقع فراہم کرنے کی پر زور وکالت کی اور کہا کہ انہیں بہترین ٹریننگ دینے کی ضرورت ہے ۔ نائب صدر جمہوریہ یہاں علاقائی ووکیشنل ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ کا افتتاح کررہے تھے جس میں ہر سال 1000 خواتین کو اسکیل ڈیولپمنٹ کی تربیت دی جائے گی ۔ تمام شعبوں میں خواتین کو یکساں مواقع دئیے جانے چاہئے ۔ ملک میں تعلیم یافتہ خواتین کا فیصد 65.45 ہے ۔ اور زیادہ سے زیادہ خواتین کو تعلیم یافتہ بنانے کی کوشش ہونی چاہئے ۔ انہوں نے آئی ٹی آئی میں نئے کورس کو متعارف کرانے کا مشورہ دیا اور کہا کہ سیاست کو صرف انتخابات تک ہی محدود رکھا جانا چاہئے ۔ نائب صدر جمہوریہ ایم وینکیا نائیڈو نے زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ ملک کی ترقی کیلئے اسکل ڈیولپمنٹ شدیدضرورت ہے ۔انہوں نے شہرحیدرآباد کے اڈوانسڈ ٹریننگ سنٹر میں ریجنل ووکیشنل ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ کے لئے سنگ بنیاد رکھتے ہوئے کہا کہ انٹرپرینرشپ کیلئے ہندوستانیوں میں موروثی ٹیلنٹ اور صلاحیت موجود ہے ۔مہارت کو بہتر بنانے اور اس کی جدید کاری کے لئے عصری تربیت کی ضرورت ہے ۔ہندوستان کی 65فیصد آبادی 35برس سے کم عمر کی ہے ۔آبادی کے اس حصہ سے فائدہ اٹھانے کی ضرورت ہے تاکہ ہماری معاشی ترقی ہوسکے ، ساتھ ہی عالمی سطح پر درکار افرادی قوت کی تکمیل کی جاسکے ۔24کلیدی شعبوں میں سال 2022 تک 109.73ماہر افرادی قوت کی ضرورت ہوگی۔اندازہ کے مطابق برطانیہ کے 68،جرمنی کے 75،جاپان کے 80اور جنوبی کوریا کے 96فیصد کے برخلاف ہندوستان کی رسمی مہارت کی تربیت صرف 4.7 ہی ہے ۔انہوں نے مزید کہا کہ ووکیشنل کی تربیت کی فراہمی کے ذریعہ ماہر افراد ی قوت پر قابوپایاجاسکتا ہے ۔اسکل ڈیولپمنٹ کے لئے علحدہ وزارت کے قیام پر مرکز کی ستائش کرتے ہوئے انہوں نے تمام بشمول حکومت اور نجی اداروں پرزور دیا کہ وہ اسکل ڈیولپمنٹ کے مقاصد کو حاصل کریں۔مرکزی وزیر اسکل ڈیولپمنٹ دھرمیندر پردھان نے کہاکہ اسکل ڈیولپمنٹ کی خواتین کو تربیت 11مرکزی حکومت کے اداروں اور 1408 ریاستی خواتین کے آئی آئی ٹیز میں دی جارہی ہے ۔علاوہ ازیں جنرل آئی ٹی آئیز میں 30 فیصد نشستیں بیشتر ریاستوں میں خواتین کے لئے مختص کی گئی ہیں۔آروی ٹی آئی حیدرآباد کے علاوہ چھ نئے آر وی ٹی آئیز پنجاب، ہماچل پردیش ، تروپورو اور تمل ناڈو میں جلد قائم کئے جائیں گے ۔یہ ،روزگار کی بہتری کے لئے خواتین کو تربیت فراہم کرنے اعلی اداروں سے معاہدہ کی سمت ایک اہم قدم ہے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT