Monday , September 24 2018
Home / دنیا / خواتین کو کھیتوں میں کام نہ کرنے کا فتویٰ دینے والا عالم دین گرفتار

خواتین کو کھیتوں میں کام نہ کرنے کا فتویٰ دینے والا عالم دین گرفتار

ڈھاکہ۔13ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ایک عالم دین کو خواتین کے بارے میں یہ فتویٰ جاری کرنے پر کہ وہ کھیتوں میں کام نہیں کرسکتیں، گرفتار کرلیا گیا۔ امام صاحب اور مسجد کے دیگر پانچ اہلکاروں کو اس اعلان کے بعد متعدد الزامات کا سامنا ہے کیونکہ ان کے فتوے سے مقامی عوام جو کمار کھلی کے باشندے ہیں، اپنی خواتین کو کھیتوں میں کام کرنے سے روک رہے ہیں۔ دریں اثناء مقامی پولیس سربراہ عبدالخالق نے بتایا کہ یہ فیصلہ نماز جمعہ کے بعد کیا گیا اور خواتین کو اپنے مکانات سے باہر قدم نہ رکھنے کی ہدایت کی گئی۔ مسجد کے لاؤڈ اسپیکر پر اس فیصلہ کا اعلان سنایا گیا اور اس پر فوری اثر کے ساتھ عمل آوری ہوئی۔ یہاں اس بات کا تذکرہ بھی دلچسپ ہوگا کہ مسلم اکثریتی بنگلہ دیش یوں تو ایک سیکولر ملک ہے لیکن یہاں کے قدامت پسند دیہی علاقوں میں آج بھی عالم دین اور مساجد کے اماموں کو کافی اختیارات حاصل ہیں اور وہ فوقتاً فوقتاً فتوے جاری کرتے رہتے ہیں، حالانکہ فتوؤں کی اجرائی پر 2001ء میں امتناع عائد کردیا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT