Monday , January 22 2018
Home / ہندوستان / داخلی سلامتی کو مستحکم کرنے منصوبہ پر زور

داخلی سلامتی کو مستحکم کرنے منصوبہ پر زور

نئی دہلی 2 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) داخلی سلامتی کی صورتحال کے نتیجہ میں حکومت کے ترقیاتی پروگرامس متاثر ہونے جیسے الزامات کا نوٹ لیتے ہوئے وزیر داخلہ مسٹر راج ناتھ سنگھ نے آج سکیوریٹی ایجنسیوں کے سربراہان اور نیم فوجی دستوں سے کہا کہ وہ فوری طور پر ملک میں داخلی سلامتی کے ڈھانچہ کو مستحکم کرنے کیلئے ایک حکمت عملی تیار کریں ۔ وزیر داخلہ

نئی دہلی 2 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) داخلی سلامتی کی صورتحال کے نتیجہ میں حکومت کے ترقیاتی پروگرامس متاثر ہونے جیسے الزامات کا نوٹ لیتے ہوئے وزیر داخلہ مسٹر راج ناتھ سنگھ نے آج سکیوریٹی ایجنسیوں کے سربراہان اور نیم فوجی دستوں سے کہا کہ وہ فوری طور پر ملک میں داخلی سلامتی کے ڈھانچہ کو مستحکم کرنے کیلئے ایک حکمت عملی تیار کریں ۔ وزیر داخلہ نے آج ایک اجلاس منعقد کیا جس میں قومی سلامتی کے مشیر اجیت دو وال ‘ انٹلی جنس بیورو ‘ را اور دوسری ایجنسیوں کے سربراہان نے شرکت کی ۔ اجلاس میں راج ناتھ سنگھ نے سکیوریٹی صورتحال کا جائزہ لیا اور ان سے کہا کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ تیز رفتار ترقی کیلئے بہتر سلامتی ماحول تیار ہوسکے ۔

اس کیلئے ایک منصوبہ تیار کیا جانا چاہئے ۔ مسٹر سنگھ نے اجلاس میں کہا کہ ترقی کیلئے ضروری ہے کہ بہتر سکیوریٹی ماحول فراہم کیا جائے اور حکومت ایسا کرنے کے تعلق سے سنجیدہ ہے ۔ اجلاس میں انٹلی جنس کے سربراہ آصف ابراہیم ‘ ریسرچ اینڈ انالائزنگ ونگ ( را ) کے سربراہ آلوک جوشی اور نیم فوجی دستوں کے سربراہان نے بھی شرکت کی ۔ وزارت داخلہ کی ذمہ داری سنبھالتے ہوئے راج ناتھ سنگھ نے اپنے عہدیداروں سے کہا تھا کہ وہ داخلی سلامتی کو بہتر بنانے کیلئے منفرد منصوبے تیار کریں اور مرکز و ریاست کے مابین تعلقات کو بہتر بھی بنانے کی ضرورت پر زور دیا تھا ۔ انہوں نے کہا تھا کہ ان منصوبوں میں پڑوسی ممالک کے ساتھ سرحدی تنازعات کو قومی مفادات پر کسی طرح کا سمجھوتہ کئے بغیر حل کرنے کا فارمولا بھی شامل رہنا چاہئے ۔ انہوں نے وزارت داخلہ میں اہم کام انجام دینے والے یونٹوں جیسے داخلی سلامتی ‘ نکسلائیٹ مینجمنٹ ‘ مرکز ریاست تعلقات ‘ جموں و کشمیر اور شمال مشرق کے ذمہ دار ڈویژنس کو اطلاعات فراہم کرنے کی بھی ہدایت دی تھی ۔

TOPPOPULARRECENT