Tuesday , November 21 2017
Home / ہندوستان / دادری سانحہ : خاطیوں کو سزا دینے امیت شاہ کا مطالبہ

دادری سانحہ : خاطیوں کو سزا دینے امیت شاہ کا مطالبہ

نئی دہلی ۔ 13 ۔ اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام) بڑا گوشت کھانے کی افواہوں پر یو پی کے علاقہ دادری میں ایک عمر رسیدہ مسلم کو زد و کوب کے ذریعہ ہلاک کردینے کا واقعہ ’’غلط‘‘ تھا اور اس جرم کے خاطیوں کو مناسب سزا دینا چاہئے۔ قومی صدر بی جے پی امیت شاہ نے آج یہ مطالبہ کرتے ہوئے اعتراف کیا کہ ان کی پارٹی کے رکن اسمبلی سنگیت سوم کو دیہات کا دورہ نہیں کرنا چاہئے تھا کیونکہ انہوں نے اس موقع پر متنازعہ بیان دیئے ہیں۔ یہ سماج وادی پارٹی حکومت کی ذمہ داری ہے کہ ریاست میں نظم و ضبط برقرار رکھے۔

دادری واقعہ کے حقائق یوپی حکومت منظرعام پر لائے
نئی دہلی ۔ 13 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) چیف منسٹر اترپردیش اکھیلیش یادو کو تنقیدوں کا نشانہ بناتے ہوئے مرکزی وزیر ثقافت مہیش شرما نے دادری سے متعلق حقائق کے انکشاف کا چیلنج کیا اور ریاستی حکومت انٹلیجنس ناکامی کے بارے میں سوالات اٹھائے۔ انہوں نے کہاکہ اترپردیش میں سماج وادی پارٹی کی حکومت ہے۔ اگر دادری واقعہ پہلے سے طئے شدہ سازش تھی تو پھر حکومت کو یہ ذمہ داری تھی کہ وہ قبل از وقت اس کا پتہ چلاتی۔ اگر حکومت سازش کرنے والوں کی نشاندہی کرلی ہے تو پھر انہیں قوم اور عوام کے سامنے انکشاف بھی کرنا چاہئے۔ مہیش شرما نے کہا کہ یہ واقعہ ہوئے 15 دن گذر چکے ہیں۔ اگر یہ منصوبہ بند تھا تو پھر انٹلیجنس کو پتہ ہونا چاہئے تھا۔ انہوں نے ایک ٹی وی چینل پر اکھیلیش یادو کے اس تبصرہ کے بعد یہ ردعمل ظاہر کیا کہ دادری واقعہ بی جے پی کا پہلے سے طئے شدہ منصوبہ تھا۔ انہوں نے کہا کہ لاء اینڈ آرڈر ریاست کا مسئلہ ہے اور اس سے نمٹنا چیف منسٹر کی ذمہ داری ہے۔ بی جے پی پر رائے دہندوں کو منقسم کرنے کے اکھیلیش یادو کے الزام پر مہیش شرما نے کہا کہ مرکزی حکومت صرف ترقی اور اچھی حکمرانی کے ایجنڈہ پر کام کررہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT